سنجے دت قید کے دوران کرسیاں اور تھیلیاں بنانا سیکھنے کیساتھ شاعر بھی بن گئے

بدھ 09 مارچ 2016


اداکار سنجے دت ساڑھے 3 سال کی قید کے دوران کرسیاں اور تھیلیاں بنانا سیکھنے کیساتھ شاعر بھی بن گئے۔پونے جیل سے رہائی کے بعد سنجے دت نے اپنا مجموعہ کلام شائع کرنے کا اعلان کیا ہے۔

انھوں نے اپنے شعری مجموعہ کا نام ’’سلاخیں‘‘ رکھا ہے۔ جیل میں سنجے دت نے اپنے دو قیدی ساتھیوں ذیشان اور سمیر کے ساتھ خوب شاعری کی۔ ان تینوں نے تقریباً 5 سو اشعار لکھے جن میں سے کم و بیش 100 اشعار منا بھائی کے ہیں۔ منا بھائی کا کہنا ہے کہ بہت جلد شاعری کا یہ مجموعہ ان کے مداحوں کے سامنے ہوگا جسکے کئی اشعار حقیقی واقعات سے متاثر ہوکر لکھے گئے ہیں۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Powered by : Murad Khan