سرجیکل سپیشلسٹ اور میڈیکل آفیسرکے بیچ تکرار نے لڑائی کی شکل اختیارکرلی

اتوار 13 مارچ 2016


چکدرہ(نامہ نگار)چکدرہ ہسپتال میں مسیحالڑپڑے،مریضوں نے بچ بچاؤکرایا،سرجیکل سپیشلسٹ اور میڈیکل آفیسرکے بیچ تکرار نے لڑائی کی شکل اختیارکرلی ،معاملہ پولیس تھانے جاپہنچا۔ذرائع کے مطابق گزشتہ روز چکدرہ میں قائم تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال میں طبی عملہ کی غیرحاضری اور دیگر شکایات کے پش نظرعلاقے کے منتخب ایم پی اے بخت بیدار خان نے ہسپتال کادروہ کیا۔بتایاجاتاہے کہ ایم پی اے کی موجودگی میں ہسپتال کے قائم مقام ایم ایس ڈاکٹرعزیزاللہ اور میڈیکل آفیسر ڈاکٹر جاوید اقبال کے درمیان تکرارہوئی جو لڑائی میں تبدیل ہوگئی اور دونوں نے ایک دوسرے پر لاتوں گھونسوں کاآزادانہ استعمال کیا تاہم ہسپتال میں موجود مریض، ان کے تیمارداروں اور دیگر طبی عملہ نے ان کے بیچ بچ بچاؤ کرایا۔ذرائع کاکہناہے کہ ایم پی اے کو طبی عملہ سے متعلق دیئے جانے والے بیانات میں تضاد مذکورہ ڈاکٹرز کی لڑائی کاسبب بناادھر بتایاجاتاہے کہ ایک ڈاکٹر نے مقدمے کے اندراج کے لئے پولیس تھانے میں درخواست بھی دی ہے جس کی تصدیق مقامی پولیس نے کرلی ہے


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Powered by : Murad Khan