اسی لاکھ روپے کا سالانہ سپورٹس فنڈز برائے2015-16ء گذشتہ ایک سال سے استعمال نہیں کیا جا سکا

جمرات 01 دسمبر 2016


بٹ خیلہ ( بیورورپورٹ) ملاکنڈ میں ڈسٹرکٹ سپورٹس آفیسر نہ ہو نے کہ وجہ سے80لاکھ روپے کا سالانہ سپورٹس فنڈز برائے2015-16ء گذشتہ ایک سال سے استعمال نہیں کیا جا سکاجس کی وجہ سے ضلع بھر میں کھیلوں کی سر گر میاں مفلوج ہو گئیں ہیں جبکہ کھلاڑیوں سمیت مختلف سپورٹس کلبز سخت مایوسی کا شکار ہیں جبکہ سپورٹس مین کی تحریک انصاف اور اس کے کپتان کی صوبائی حکومت بھی ملاکنڈ کی ضلعی حکومت کے بار بار رابطے اور مطالبے کے باوجود خاموش تماشائی بنی ہو ئی ہے جبکہ دوسری جانب ضلع ناظم سید احمد علی شاہ سمیت ممبران ضلع کونسل امجد علی شاہ حاجی فدا محمد خان اور مہابت خان وغیرہ نے ڈی ایس او کی تعیناتی میں مسلسل تاخیر پر سخت افسوس کا اظہار کیا ہے انھوں نے کہا کہ گذشتہ ایک سال سے ملاکنڈ میں سپورٹس آفیسر نہ ہو نے کی وجہ ڈسٹرکٹ گورنمنٹ اپنے بجٹ میں موجود نوجوانوں و کھلاڑیوں کی فلا ح و بہبود اور کھیلوں کے فروغ کیلئے مختص خطیر رقم80لاکھ روپے استعمال کر نے سے محروم ہے کیو نکہ ڈی ایس او کی تعیناتی کا اختیار صو بائی حکو مت کے پاس ہے جس میں نہ صرف وہ تال مٹول سے کام لے رہی ہے بلکہ کسی دوسرے آفیسر کو بھی اختیار منتقل نہیں کئے جا رہے جو کہ یہاں کے کھلاڑیوں کے ساتھ سو تیلی ماں کے سلوک کے مترادف ہے اور انتہائی غیر ذمہ دارانہ ہونے کے باوجود قابل مذمت بھی ہے۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Powered by : Murad Khan