سوات ، کاشتکاروں کا مطالبات کے حق میں احتجاج

بدھ 06 دسمبر 2017


سوات(مانند رپورٹ )سوات میں کاشتکاروں کا اپنے مطالبات کے حق میں احتجاجی مظاہرہ ،شدید نعرہ بازی ،مطالبات منظورنہ ہونے کی صورت میں صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاج کریں گے،اس سلسلے میں آل سوات مقامی کاشتکاران کمیٹی کے عہدیداروں اور دیگر اراضی مالکان نے سوات پریس کلب میں احتجاجی مظاہرہ کیا اور بعدازاں پریس کانفرنس کی جس سے خطاب کرتے ہوئے کاشتکاران کمیٹی کے صدرمنصورعلی،جنرل سیکرٹری ماسٹر خان زمان،ظاہر خان، شیررحمان اوردیگر نے کہاکہ بندوبست کے وقت قوم کی کافی اراضی جنگلات میں چلی گئی ہے ،ان کی حد براری کیلئے فارسٹ سیٹلمنٹ بورڈقائم کیا جائے تاکہ قوم کی اراضی اسے مل سکے،انہوں نے کہاکہ یہاں پر فارسٹ سیٹلمنٹ بورڈموجود نہیں جس کے سبب لوگ اپنے تنازعات اور مشکلات حکومت تک نہیں پہنچاسکتے،انہوں نے کہاکہ یہاں ایسے بھی لوگ ہیں جو پہاڑوں میں آباد ہیں اگر حدودرکھی گئیں تو وہ لوگ کہاں جائیں گے اس کے علاوہ دیہاتی علاقوں کے لوگوں کو کسی قسم کی سہولت میسر نہیں خصوصاََسوئی گیس نہ ہونے کی وجہ سے یہ لوگ پہاڑوں سے سوختی لکڑی لانے پر مجبور ہیں مگر اب لوگوں کے جنگلات میں جانے پر پابندی لگائی جاتی ہے جبکہ چراگاہیں بند کرناکاشتکاروں کا معاشی قتل ہے،انہوں نے کہاکہ جنگلات اور عام اراضی وآبادی کے مابین نمایاں حدودموجودہیں ،جنگلات سے باہر جو اراضی ہے جو قوم کی ہے ہمیں ایک ایسابورڈ یا کمیٹی چاہئے جو قوم کی اراضی قوم کے حوالے کریں،انہوں نے کہاکہ مسئلہ کے حل کیلئے حکومتی اہلکاروں سے ملاقاتیں کیں مگر کوئی شنوائی نہیں ہوئی ،انہوں نے حکومت سے فوری طورپر مسئلہ حل کرنے کا مطالبہ کیا اورکہاکہ اگر مسئلہ جلد ازجلد حل نہیں ہوا تو صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاج کرنے پر مجبورہوجائیں گے،اس موقع پر جہانگیر،گل رحمان،خان زمان،تاج محمد اوردیگر بھی موجود تھے۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Powered by : Murad Khan