ہنگو ، میڈیکل مشینری اور آلات کی منتقلی کے خلاف زبردست احتجاجی مظاہرہ

منگل 10 اپریل 2018


ہنگو (مانند رپورٹ) ہنگو پریس کلب کے سامنے علماء کرام اور علاقہ مشران کی قیادت پرانے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال سے میڈیکل مشینری اور آلات کی منتقلی کے خلاف زبردست احتجاجی مظاہرہ ۔حکومت کے خلاف شدید نعرہ بازی۔ پریس کلب سے ٹی ایچ کیو ہسپتال تک احتجاجی ریلی بھی نکالی گئی۔ مظاہرین نے نئے فعال ہونے والے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارتر ہسپتال سے پرانے ہسپتال کی مشینری واپس لانے اور پرانے ہسپتال کو شہری عوام کے لئے فعال برقرار رکھنے کا مطالبہ کر دیا ۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ ماہ وزیر اعلیٰ خیبر پختونخواہ پرویز خٹک نے ہنگو میں نئے تعمیر ہونے والے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال کا افتتاح کے بعد ہسپتال کو باقاعدہ طور پر فعال رکھنے کے لئے حکومت کی جانب سے منظور شدہ فنڈز سے سامان خریدنے کے بجائے پرانے تحصیل ہیڈ کوارٹر سے میڈیکل مشینری و دیگر آلات اور سٹاف کو منتقل کر دیا گیا جس کے باعث پرانہ تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کھنڈرات اور ویرانے کا منظر پیش کرنے لگا ۔ جس پرعلماء کرا م اور علاقہ مشران کی قیادت میں ہنگو پریس کلب کے سامنے شدید احتجاجی مظاہرہ کیا گیاجبکہ ہنگو پریس کلب سے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال تک احتجاجی ریلی بھی نکالی گئی جس میں سابق ایم پی اے عتیق الرحمان، اے این پی کے صوبائی رہنماء حسین علی شاہ، مولانا عبد الجلیل، سپین خان و دیگر شریک تھے ۔احتجاجی مظاہرے کے باعث مین جی ٹی روڈ کو ہر قسم کے ٹریفک کے لئے بند رکھا گیا ۔مظاہرین کا کہنا تھا کہ سیکٹری ہیلتھ خیبر پختونخواہ کے احکامات کے مطابق نئے ہسپتال کے فعال ہونے کے بعد بھی پرانے تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کو ڈی کیٹیگری میں تحصیل سطح پر فعال رکھا جائے گا تا ہم افتتاح کے بعد سامان منتقلی کے ساتھ ساتھ سٹاف کو بھی منتقل کر دیا گیا ہے جس وجہ سے شہری عوام کو علاج معالجہ میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ مظاہرین نے کہا کہ بارہاں احتجاج کے باؤجود سامان اور سٹاف واپس نہیں کیاگیاجبکہ تا حال نئے ہسپتال کے لئے حکومت کی جانب سے منظورہ شدہ فنڈز پر بھی میڈیکل مشینری اور دیگر آلات کی خریداری نہ ہوسکی اورسیکٹری ہیلتھ کے احکامات پر بھی عمل درآمد نہیں کیا گیا۔مظاہرین نے مطالبہ کیا کہ اگر فوری طور پر نئے ڈی ایچ کیو ہسپتال سے پرانے ہسپتال میں سامان اور سٹاف واپس نہیں لایا گیا گا تو آئیندہ لائحہ عمل کے تحت قومی سطح پر احتجاجی مظاہروں کے ساتھ ساتھ مکمل شٹر ڈاون پڑتال بھی کیا جائے گا جس کی تمام تر ذمہ داری سرکاری پر ہوگی۔ 
 


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Developed by : Murad Khan