0

تعلیمی ادارہ ماہ جون جولائی و اگست کی فیس وصول نہ کریں

مظفرآباد (مانند نیوز ڈیسک) محکمہ تعلیم سکولز نے جمعہ کے روز تمام نجی وسرکاری سکولوں کے لیے حکم نامہ جاری کیا ہے کہ عدالت العظمیٰ کے حکم مصدرہ 24ستمبر مقدمہ عنوانی تیمور علی خان وغیرہ کی تعمیل میں پرائیویٹ تعلیمی ادارہ جات کو ماہ جون جولائی و اگست 2020کی فیس وصول نہ کرنے کی منظوری صادر فرمائی ہے۔دوسری جانب پرائیویٹ سکول اینڈ کالج ایسوسی ایشن ایپسکا جمعرات کے روز کی جانے والی اپنی پریس کانفرنس پر قائم ہے جس میں تنظیم نے کہا تھا کہ سپریم کورٹ نے پرائیویٹ تعلیمی اداروں کو فیس لینے سے نہیں روکا،سپریم کورٹ کا حکم میرپور میں قائم دو انٹرنیشنل سکولوں سے متعلق تھا۔پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن کے صدر سید اشتیاق بخاری نے کہا کہ محکمہ تعلیم کے ذمہ داران سپریم کورٹ کے حکم کی درست تشریح نہیں کررہے جبکہ دوسری جانب محکمہ تعلیم کا کہنا ہے کہ انہوں نے سپریم کورٹ کے فیصلے کی من وعن تشریح کی ہے اور پرائیویٹ سکولز حکم نامہ پر فوری عملدرآمد کریں تاہم پرائیویٹ سکولز نے نوٹیفکیشن ماننے سے انکار کردیا ہے۔دوسری جانب سپریم کورٹ کے ایڈیشنل رجسٹرار نے بھی حکومتی نوٹیفکیشن کو درست قرار دیتے ہوئے واضح کیا ہے کہ سپریم کورٹ نے دوران لاک ڈاؤن جون،جولائی اور اگست کی فیس لینے پر سٹے جاری کیا ہے اور اس مدت کی فیس سکول مالکان نہیں لے سکتے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں