0

ہزارہ ڈویژن میں کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز پرتشویش، کمشنر ہزارہ

ایبٹ آباد (مانند نیوز ڈیسک) ہزارہ ڈویژن میں کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز پرتشویش کا اظہار کرتے ہوئے کمشنر ہزارہ ڈویژن ریا ض خا ن محسود کی سربراہی میں ہونے والی ایک اعلیٰ سطحی اجلاس نے حکومت کو شفارش کی ہے کہ پولیو کی مجوزہ مہم کو موخر کرکے ساری توجہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے پر مرکوز کی جائے تاکہ کسی بھی ممکنہ ہنگامی صورتحال کو آسانی سے کنٹرول کیا جا سکے۔ یہ بات منگل کے روز کمشنر ہزارہ ڈویژن ریاض خان محسود کی سربراہی میں کمشنر ہاؤس ایبٹ آباد میں منعقدہ ایک اجلاس میں کی گئی۔ اجلاس میں ڈویژن بھر کے ڈپٹی کمشنرز، ڈی ایچ اوز اور دوسرے متعلقہ افسران نے شرکت کی۔ اجلاس میں پولیو اور کورونا وائرس کے متعلق تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ اس موقع پر محکمہ صحت کے افسران نے اجلاس کو بتایا کہ کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز میں آنے والی سردی کے موسم میں مزید اضافے کا خدشہ ہے لہذا اس کے پیشِ نظر پولیو سے بچاؤ کی مہم کو مؤخر کیا جائے تاکہ تمام تر توجہ کورونا وائرس سے بچاؤ کے مہم پر مرکوز کی جا سکے۔ کمشنر ہزارہ ریاض خان محسود نے اجلاس کو بتایا کہ ضلعی انتظامیہ، محکمہ صحت اور تحصیل میونسپل انتظامیہ کو اپنی سٹریٹجی آسان سے آسان تر بنانے کی ضرورت ہے۔ جس میں عوام کو ماسک لگانے، ایک دوسرے سے ہاتھ نہ ملانے، آپس میں فاصلہ برقرار رکھنے اور ہاتھ دھونے کی زیادہ سے زیادہ تشہیر کی جائے۔ انہوں نے کہا عوام میں اس حوالے سے شعور کی بیداری کا کام بھر پور انداز میں انجام دیا جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس دفعہ ہمیں زیادہ خطرناک صورتحال کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ کمشنر نے اس امید کا اظہار کیا کہ ہزارہ ڈویژن کے عوام باشعور اور تعلیم یافتہ ہیں اور وہ اپنی اور اپنے پیاروں کی صحت کا خیال رکھنے کا اپنی زمہ داری بھرپور طریقے سے نبھائنگے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں