0

بشام، حکومت کی جانب سے زون ٹو میں بھی صحت کارڈ پلس کا اجراء کردیا

بشام (مانند نیوز ڈیسک) صوبائی حکومت کی جانب سے زون ٹو میں بھی صحت کارڈ پلس کا اجراء کردیا گیا ہے۔ صوبائی وزیر محنت وثقافت شوکت یوسفزئی نے بشام   میں منعقدہ تقریب میں پروگرام کا باقاعدہ افتتاح کیا۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر شانگلہ حامد الرحمن کے علاوہ پاکستان تحریک انصاف ملاکنڈ ڈویژن کے سینئر نائب صدر سدید الرحمن، نواز محمود خان، پارٹی کے ضلعی صدر وقار احمد خان، ضلعی جنرل سیکرٹری عبدالمولا خان اور دیگر بھی موجود تھے۔ صحت پلس پروگرام سے پورے صوبے میں چار کروڑ سے زائد لوگوں کو صحت کی مفت سہولت میسر ہوں گی اور شانگلہ کے سات لاکھ افراد بھی اس پروگرام سے مستفید ہوں گے اورہر شخص بلا تفریق مفت علاج کرسکے گا بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شوکت یوسفزئی نے کہا کہ کرونا وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے اور اپوزیشن کو بھی پتہ ہے کہ کرونا پھیل رہا ہے پھر بھی وہ لوگوں کو باہر نکلنے کا کہہ رہے ہیں ایسے میں انسانی جانوں سے کھیلنا کھلی دہشت گردی ہے جو لوگ یہ کام کررہے ہیں ان کے خلاف پینڈیمک ایکٹ کے تحت کاروائی ہوگی۔ صوبائی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ کسی کو انسانی جانوں سے کھیلنے کی اجازت نہیں دی جا ئے گی۔ پی ڈی ایم والے تاریخیں دیتے رہیں کوئی فرق نہیں پڑتا مریم نواز اور بلاول اپنے باپوں کو این آر او دینے کیلئے نکلے ہیں۔فضل الرحمان پہلی بار اسمبلی سے باہر ہے ان لوگوں کی سیاست ختم ہوگئی ہے اب یہ لوگ بھارت اور اسرائیل کی زبان بول رہے ہیں۔چاہے کچھ بھی ہو جائے عمران خان این آر او دینے والا نہیں۔ شوکت یوسفزئی کا کہنا تھا کہ ان لوگوں نے ملک کو قرضے تلے دبا دیا ہے۔وزیر اعظم عمران خان ملک کو معاشی طور پر صحیح سمت میں لیکر جارہے ہیں ملک ترقی اور خوشحالی کی راہ پر گامزن ہوچکا ہے انہوں نے کہا کہ شانگلہ میں بھی ترقی کا دور شروع ہوچکا ہے اور تبدیلی اب ہر جگہ نظر آرہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ محمود خان کی قیادت میں صوبہ کے ہر کونے میں ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے صوبائی وزیر نے کہا کہ ترقیاتی منصوبوں میں تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں