0

پی ڈی ایم نوشہرہ کا ضلعی سطح پر احتجاجی جلسوں کا اعلان کردیا

نوشہرہ (مانند نیوز ڈیسک) پی ڈی ایم نوشہرہ نے حکومت کی جانب سے ملتان میں پی ڈی ایم کے کارکنوں اور رہنماوں کو حراساں کرنے کے خلاف ضلعی سطح پر احتجاجی جلسوں کا اعلان کر دیا بعد از نماز جمعہ شوبرا چوک نوشہرہ اور اتوار کو نماز ظہر کے بعد پبی میں بھر پور قوت کا مظاہرہ کیا جائے گا  30نومبر کو ثابت ہو گیا کہ ملتان کا سلطان مولانا فضل الرحمان اس سلسلے میں جمعیت علما اسلام ضلع نوشہرہ کے دفتر میں پی ڈی ایم نوشہرہ کا ایک اہم اجلاس منعقد ہوا جس میں جمعیت علما اسلام کے امیر قاری محمد اسلم، جنرل سیکرٹری مفتی حاکم علی حقانی، عوامی نیشنل پارٹی کے میاں تجمل شاہ کاکاخیل، پاکستان مسلم لیگ ن کے امجد نوخارے، نبی امین، پاکستان پیپلز پارٹی کے جنرل سیکرٹری سعید اللہ، سیکرٹری اطلاعات فلک ناز خان، قومی وطن پارٹی کے چیئر مین ولی الرحمان سمیت دیگر رہنماوں نے کثیر تعد اد میں شرکت کی اجلاس سے مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پی ڈی ایم کے جلسوں نے حکمرانوں کی نیندیں حرام کر دی ہیں اور اب نااہل حکمران اوچھے ہتکنڈوں پر اتر ائے ہیں اور ملتان میں پی ڈی ایم کے جلسے میں تو پنجاب حکومت نے آئین کی دھجیاں اڑا دیں ہیں کیونکہ ملتان میں کبھی کورونا کے پیچھے چھپ رہے تھے جب کچھ نہ بن سکا تو عین موقع پر پنجاب پولیس کے زریعے پی ڈی ایم کے کارکنوں اور رہنماوں کو حراساں کرنے کی کوشش کی جس میں وہ ناکام رہے انہوں نے مزید کہا کہ 2021کا سورج نوید لیکر ابھرے گی اور قوم کو نااہلوں سے چھٹکارا دلاکر رہیں گے انہوں نے مزید کہا بروز جمعہ بعد از نماز شوبراچوک نوشہرہ اور اتوار کے روز نماز ظہر کے بعد پبی میں پولیس گردی اور ریاستی مشنری کو سیاسی انتقام کیلئے استعمال کرنے کے خلاف بھر پور احتجاج کریں گے اگر کسی نے رکاوٹ ڈالنے کی کوشش کی تو ہم بھی اینٹ کا جواب پتھرسے دیں گے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں