0

سردی شروع ہوتے ہی گیس کی ناروا لوڈ شیڈنگ شروع

تخت بھائی (مانند نیوز ڈیسک)سردی شروع ہوتے ہی گیس کی ناروا لوڈ شیڈنگ شروع ہوتی ہے جب صبح سویرے آذان ہوتا ہے تو آذان  سے پہلے گیس غائب ہوتا ہے معذور اور بزرگ مرد اور عورت گرم پانی کے وضو کرنے سے قاصر ہوتے ہیں اور ساتھ ساتھ جب بچے سکول کو جاتے ہیں تو بغیر ناشتے سے روتے روتے ہوئے اسکول جاتے ہیں تو آپ خود سوچ لے کہ بچے بغیر ناشتے سے پڑھائی کیسے کریں گے اول تو گیس نہیں آتا اگر آتا ہے تو وہ کچھ سیکنڈ کے لئے اور وہ بھی نہ ہونے کے برابر ہوتا ہے تو میں پھر کہوں گا کہ یہ کونسا انصاف ہے آخر کب تک غریب لوگ اس عظیم نعمت سے محروم رہیں گے جو بھی حکومت آتا ہے تو یہی کہتے ہیں کہ ہم  گیس اور بجلی  کی لوڈشیڈنگ کو  ختم کریں گے اصل میں یہ بجلی اور گیس کی بات نہیں کرتے بلکہ صرف غریب لوگوں کو اندھیروں میں ڈالتے ہے۔اور یہ حکومت لوڈشیڈنگ ختم نہیں کر رہا بلکہ غریب کو ختم کر رہا ہے۔آخر یہ سلسلہ کب تک رہے گا اس ملک میں  غریب خوشی کے سانس کب لینگے۔ حکومت صرف گیس اور بجلی کے بلوں میں اضافہ کرنے میں مصروف ہوتے ہیں اگر یہی تبدیلی ہے تو ہم اس تبدیلی کو سلام کرتے ہیں غریبوں کو خدا کے لئے پرانا  پاکستان دیں کیونکہ وہ پرانے پاکستان میں  خوش تھے نئے پاکستان کی ضرورت نہیں ہے۔  جلدی 2021 شروع ہوہنگے غریبوں کا یہی  فریاد ہے کہ بجلی اور گیس کی لوڈشیڈنگ کا خاتمہ کرکے انہیں چھین کی زندگی دیں۔ حکمران اقتدار تک پہنچ گیا ہیں۔ وہ بھول چکے ہیں کہ الیکشن آنے والا ہے۔ اور یہی حکمران ووٹ کیلئے آئینگے تو کس منہ سے آئینگے۔ نوجوانوں کیلئے نوکریاں دے اور مہنگائی کا خاتمہ کرے تاکہ اور لوگوں کی طرح غریب بھی اس میں بہتر اور خوشحال زندگی گزار سکے ہم 2021 میں کس سوچ کو لے کر داخل ہوں گے؟

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں