0

شانگلہ پولیس کی سالانہ کار کردگی رپورٹ جاری

شانگلہ (مانند نیوز ڈیسک) ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر شانگلہ رحیم شاہ خان نے یکم جنوری 2020سے 31دسمبر2020تک شانگلہ پولیس کی مجموعی جاری کر دی ہے۔منشیات کی روک تھام کے لئے اقدامات کرتے ہوئے شانگلہ پولیس نے یکم جنوری 2020سے منشیات فروشوں کے خلاف مجموعی طور پر 507مقدمات درج کئے اور نامزد جملہ ملزمان قانون کی گرفت میں لائے گئے۔ مختلف کاروائیوں کے دوران 65کلو گرام چرس70گرام افیون15گرام ہیروین اورایک لیٹر شراب برآمد کئے۔شانگلہ پولیس نے مختلف کاروائیوں کے دوران23کلاشنکوف،01ہیوی میشن گن،41رائفل205بندوق،418پستول،17030کارتوس، 47.245کلو گرام بارود1857 فٹ بتی، 214ڈائنامنٹ،21ڈیٹونیٹر،14چاقو،9770پٹاخے،780سلیپران برآمد کئے۔ اسی طرح شانگلہ پولیس نے سال2020کے دوران کل44عدد سرقہ شدہ گاڑیاں برآمد کئے جن میں 29گاڑیاں بعد از تکمیل انکوائری حوالہ مالکان ہوئیں جبکہ 15کے خلاف انکوائریاں جاری ہے ہیں.سال کے دوران عرصہ دراز سے روپوش 29 قتل، اقدام قتل میں ملوث مجرمان اشتہاریوں کو گرفتار کیا گیا جن میں ایک اہم دہشت گرد بھی شامل ہے۔ پچھلے سال 4497افراد کو ڈرائیونگ لائینس جاری کئے گئے ہیں جس سے 37لاکھ 64ہزار روپے قومی خزانے میں جمع ہوئی۔شانگلہ پولیس کی جانب سے شانگلہ کے عوام کو 1417پولیس کلئیرنس سرٹیفیکیٹ ایشو کئے گئے جبکہ 69ڈیپارٹمنٹل ویریفیکشن سرٹیفکیٹ بھی ایشو ہوئے جو کہ قومی اور بین الاقوامی سطح پر سفر کرنے والوں کے لئے کافی اہمیت رکھتے ہیں۔ڈی پی او آفس اور جدید ٹیکنالوجی کے بدولت یکم جنوری2020سے اب تک 73تحریری شکایات موصول ہوئی ہے جن میں 70پر کاروائی کرکے شکایت کنندہ گان کے شکایات کا ازالہ کیا گیا۔ یکم جنوری 2020سے اب تک 4287 ایف آئی درج کئے گئے ہیں جن میں تمام نامزد ملزمان گرفتار کر لئے گئے ہیں۔ شانگلہ میں ٹریفک قوانین کے خلاف ورزیوں پر 67375چالان دئے گئے جس سے 01کروڑ 65لاکھ روپے قومی خزانہ میں جمع ہوئی.انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختونخواہ ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی کے احکامات کے روشنی میں ریجنل پولیس آفیسر ملاکنڈ ڈویژن محمد اعجاز خان کی خصوصی ہدایت پر سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے زیر اہتمام ٹریفک ہیڈکوارٹرز پشاور میں ٹریفک منیجمنٹ سسٹم ٹریفک قوانین,ٹریفک سگنلز اور خصوصی طور پر ای ٹیکٹنگ نظام کے متعلق تربیت دینے کے بعد شانگلہ میں ای چالان کا اغاز ہوا۔ ای چالان کے نفاز سے پورے عمل میں شفافیت ائی اور کسی قسم کی خردبرد کے راستے ہمیشہ کے لئے مسدود ہوئے۔اسی طرح شانگلہ پولیس نے 1095سرچ اینڈ سٹرائیک اپریشنز کئے جن کی بدولت کوئی ناخوشگوار واقعہ رونما نہیں ہوا۔شانگلہ پولیس نے سال2020میں نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کرتے ہوئے 5160مشتبہ.افراد کو گرفتار کیا اور نیشنل ایکشن پلان کے تحت214مقدمات بھی درج کئے۔ڈی ار سی شانگلہ کو سال2020میں کل113درخواستیں موصول ہو ئیں جن میں 103کو فریقین کے درمیان باہمی رضامندی سے تصفیہ کر کے حل کیا گیا جبکہ10کو مزید قانونی کاروائی کیلئے تھانوں کوبھیجے گئے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں