0

ایبٹ آباد کو سیاحتی مقام کے طور پر قائم رکھنے کے لیے پلاسٹک کا استعمال ترک کرنا ہوگا، ڈپٹی کمشنر

ایبٹ آباد (مانند نیوز ڈیسک) ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد محمد مغیث ثناء اللہ نے کہا ہے کہ ایبٹ آباد کو سیاحتی مقام کے طور پر قائم رکھنے کے لیے پلاسٹک کا استعمال ترک کرنا ہو گا اس حوا لے سے شہری کپڑے اور فائبر کے تھیلے استعما ل میں لائیں اور شہر کی بہتری کے لیے ضلعی انتظامیہ کا ساتھ دیں۔ان خیا لا ت کا اظہا ر انہو ں نے جمعہ کے روز پلاسٹک بیگز کے خاتمے اور کپڑے کے بیگز کے استعمال کے حوالے سے مانسہرہ روڈ کے اطراف مختلف میگا مالز جن میں اٹالین مال سپلائی، گیلانی مارٹ کالا پل اور سیو مارٹ منڈیاں کا دورہ کیا۔ انہوں نے مالز انتظامیہ سے ملاقات کی اور کپڑے کے تھیلوں کا معائنہ کیا اورمالز انتظامیہ کی  کپڑے اور فائبر کے تھیلوں کی قیمتوں میں کنٹرول کے حوالے سے ہدایات جاری کیں تاکہ تمام شہری بغیر کسی اضافی بوجھ کے خریداری کر سکیں میگا مالز کے معائنہ کے موقع پر شہریو ں اور دوکا ندارو ں سے با ت چیت کر تے ہو ئے کیا۔ضلعی انتظامیہ کی ہدایات پر ماحول کی بہتری اور آلودگی میں کمی کے لیے ایبٹ آباد میں میگا مالز اوربرینڈز نے پلاسٹک کے خاتمے کے لیے اہم اقدامات اٹھائے ہیں اور پلاسٹک بیگز کو پورے طور پر خیر آباد کہ دیا ہے۔ اس کے علاوہ انہوں نے مالز انتظامیہ کا شکریہ ادا کیا اور شہریوں کی جانب سے کپڑے کے تھیلوں کے استعمال پر خوشی کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کے زہنوں میں اس بات کو بٹھانا ہمارا فریضہ ہے کہ پلاسٹک واقعی ایک مہلک چیز ہے جس کی وجہ سے ہمارے ماحول، صحت اورسیاحت کی صنعت  پر برے اثرات پڑ رہے ہیں۔  اس کے ساتھ ساتھ انہوں نے میڈیا پر زور دیا کہ وہ پلاسٹک کے حوالے سے لوگوں میں آگاہی پیدا کریں تا کہ لوگوں کو پلاسٹک کے نقصانات کا اندازہ ہو۔ ایک سوال کے جواب میں ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد نے میڈیا کو بتایا کہ صوبائی حکومت کے احکامات کی روشنی میں شہر سے پلاسٹک بیگز کا صفائی جاری رہے گا اور کسی کے ساتھ بھی کسی قسم کی کوئی رعایت نہیں کی جائے گی۔ ایسے تمام ہول سیلرز جو پلاسٹک کے بجائے کپڑے اور فائبر کے تھیلوں کے استعمال شروع کریں گے ضلعی انتظامیہ  اسے خوش آمدید کہے گی اور ہر ممکن تعاون کو یقینی بنایا جائے گا۔ اس موقع پر ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر-III ایبٹ آباد امین الحسن بھی ان کے ہمراہ موجود رہے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں