0

مشیر سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی کے پی کا ویڈیو گیمنگ انڈسٹری کو فروغ دینے کا فیصلہ

پشاور (مانند نیوز ڈیسک) مشیر سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی ضیاء اللہ خان بنگش نے کہا ہے کہ گیمنگ انڈسٹری سے حقیقی معاشی فائدہ اٹھانے کے لیے اقدامات اٹھا رہے ہیں۔ پاکستان میں صلاحیت کی کمی نہیں، نوجوانوں کو پیسہ بنانے اور انکی صلاحیتوں سے استفادہ حاصل کرنے کا نیا موقع دیں گے۔ انھوں نے کہا کہ خیبرپختونخوا حکومت ٹیکنالوجی سے معیشت کو بہتر بنانے کے منصوبوں کا آغاز کر رہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے یہاں سے جاری کردہ اپنے ایک بیان میں کیا۔ ضیاء اللہ خان بنگش نے کہا کہ خیبرپختونخوا انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے تعاون سے نئی گیمز بنانے کے لیے ایک بجٹ مختص کرنے پر غور کر رہے ہیں جس کے ذریعے بچوں کو ڈیویلپمنٹ کی تربیت دلوائی جائے گی اور نئے آئیڈیاز پر کام کر کے دنیا کے سامنے بہترین گیمز متعارف کروائی جائیں گی۔ انہوں نے کہا کہ گیمنگ انڈسٹری دنیا بھر میں سب سے زیادہ تیزی سے ترقی پانے والی صنعتوں میں سے ایک ہے، یوٹیوبرز کی طرح اب گیمرز کے لیے بھی آگے بڑھنے کے بہت سے مواقع موجود ہیں۔ ضیاء اللہ خان بنگش نے کہا کہ بہت جلد خیبرپختونخوا میں گیمنگ انڈسٹری کو فروغ دینے کے لیے عملی اقدامات اٹھائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ خیبرپختونخوا میں بہت سارے ورچوئل گیمز کمپنیز موجود ہیں، پاکستان کے باقی شہروں سے بھی گیمنگ انڈسٹری سے وابسطہ کمپنیز کو خیبرپختونخوا مدعو کیا جائے گا اور ایک دوسرے کے تجربات سے استفادہ حاصل کیا جائے گا۔ ضیاء اللہ خان بنگش نے کمپنیوں کو سہولیات کی فراہمی کے حوالے سے کہا کہ جو بھی خیبرپختونخوا میں اپنا سیٹ اپ لگانا چاہتے ہیں صوبائی حکومت بھرپور تعاون اور معاونت فراہم کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ خیبرپختونخوا میں بہت جلد ورچوئل گیمنگ ٹورنامنٹ کا انعقاد کریں گے جس میں خیبرپختونخوا اور پورے پاکستان کے نوجوان اس میں حصہ لے سکیں گے۔اس ٹورنامنٹ کیلئے تمام تر تیاریاں مکمل کر لی گئی ہیں اور بہت جلد شرکت کر نے والوں کو مدعو کیا جائے گا۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں