0

بارشیں نہ ہونے کے باعث بیماریوں میں اضافہ، بچے اور بزرگ زیادہ متاثر

پشاور (مانند نیوز ڈیسک) طویل خشک سالی اور بارشیں نہ ہونے کے باعث پشاور سمیت صوبے کے دیگر اضلاع میں موسمی بیماریوں نے لوگوں کو لپیٹ میں لے لیا۔زیادہ تر نومولود بچے اور ضعیف العمر افراد متاثر ہورہے ہیں۔متاثرین کو نزلہ،زکام،کھانسی اور بخار کی شکایت ہے جبکہ طبی ماہرین نے مطابق خشک موسم اور بارشیں نہ ہونا بیماریوں کا سبب بن رہا ہے۔تفصیلات کے مطابق پشاور سمیت سوات،دیر بالا،دیر لوئر،شانگلہ،چترال اور دیگر اضلاع میں عرصہ دراز سے بارشیں نہ ہونے اور خشک موسم کے باعث موسمی بیماریوں نے جنم لیا ہے جس سے بچے اور بزرگ زیادہ متاثر ہورہے ہیں جن کو نزلہ،زکام،کھانسی اور بخار کی شکایت ہے۔پشاورکے سرکاری ہسپتالوں سمیت پرائیویٹ کلینکس میں ان دنوں موسم سے متاثرہ افراد کی بڑی تعداد علاج معالجہ کے لئے آرہی ہے۔اس حوالے سے ماہرین صحت زیادہ تر متاثرین کو الرجی کی ادویات تجویز کر رہے ہیں تاہم ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ بارشیں نہ ہونے کی وجہ سے بیماریوں نے جنم لیا ہے۔اگر بارشیں ہو جائیں تو بیماریوں میں کمی آئے گی۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں