0

بٹ خیلہ میں نیوز ایجنٹ کے قتل کے خلاف سینکڑوں مشتعل لوگ سڑکوں پرنکل آئیں

بٹ خیلہ(محمدعثمان یوسفزئی سے) بٹ خیلہ میں نیوزایجنٹ سردارعلی خان کے قتل کے خلاف سینکڑوں مشتعل لوگ سڑکوں پرنکل آئیں نعش کوسڑک پررکھ کرپشاورمینگورہ روڈہرقسم ٹریفک کیلئے بندکرکے ملزمان کوگرفتارکرنے کامطالبہ جبکہ مالاکنڈانتظامیہ کے خلاف شدیدنعرہ بازی۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ شام نیوزایجنٹ سردارعلی خان ولدفضل حنان مرحوم اپنے گھرارہاتھاکہ ہیڈورکس کے قریب نامعلوم ملزمان نے فائرنگ کرکے جس کے نتیجے میں سردارعلی خان موقع پرجاں بحق جبکہ ساتھی شدیدزخمی ہوگئے وہ فوری طورپربٹ خیلہ ہسپتال سے پشاورمنتقل کردیااطلاع ملتے ہی صبح سینکڑوں مشتعل لوگوں نے نعش کوسڑک پررکھ کرپشاوراورمینگورہ روڈکوہرقسم ٹریفک کیلئے بندکردیااس موقع پرمشتعل عوام نے سردارعلی خان کے قاتلوں کوفوری گرفتارکرنے کامطالبہ کیااورانتظامیہ کے خلاف شدیدنعرہ بازی کی اس موقع پراسسٹنٹ کمشنر سہیل خان موقع پرپہنچ کرمشتعل مظاہرین کے ساتھ کامیاب مذاکرات کرکے ان کویقین دہانی کرادی کے ملزمان کوتین دن کے اندراندرگرفتارکرکے قانون کے کٹہرے میں لائنگے۔مظاہرے سے بٹ خیلہ کے سابق ناظم مشتاق آحمدراہی نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ مالاکنڈلیویز کے کمانڈنٹ/ڈپٹی کمشنراوراے سی جرائم پیشہ عناصرکے ساتھ اس جرم میں برابرکے شریک ہیں کیونکہ ان کے ایماء پرمالاکنڈمیں منشیات فروشی کارچوری اورقتل وغارت کابازارگرم ہے وہ صرف اورصرف مال کمانے میں مصروف ہیں انہوں نے کہاکہ ہم حکومت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ ایف آئی ارمالاکنڈانتظامیہ کے خلاف درج کیاجائے اس سلسلے میں جب ہمارے نمائندے نے پوسٹ کمانڈرصوبیدارتاج مالک سے رابطہ کیاتوانہوں نے موقف اختیارکیاکہ ہم ملزمان کوگرفتارکرنے کیلئے تھانے سے باہرہیں اورمقدمہ درج کردی ہے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں