0

صوبے میں ایک ہی ٹیسٹنگ ایجنسی کے تحت ریکروٹمنٹ کریں گے، کامران بنگش

پشاور (مانند نیوز ڈیسک) معاون خصوصی برائے اطلاعات و اعلیٰ تعلیم کامران بنگش کی زیر صدارت ٹیسٹنگ ایجنسی ایٹا کا جائزہ اجلاس ہوا۔ایٹا حکام کی جانب سے مختلف امور و کارکردگی پر گفتگو کی گئی۔ سیکرٹری ہائیر ایجوکیشن داؤد خان سمیت ایٹا کے اہلکاروں نے اجلاس میں شرکت کی۔معاون خصوصی کامران بنگش نے کہا کہ صوبے میں ایک ہی ایجنسی کی تحت ریکروٹمنٹ عمل کنڈکٹ پر کام تیز کر دیا ہے۔ٹیسٹنگ ایجنسی ایٹا کی استعداد کار بڑھانے کے لیے عملی اقدامات اٹھائے گئے ہیں۔تمام شعبہ جات میں میرٹ و شفافیت کی بالادستی قائم رکھنے کے لیے کوشاں ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ ریکروٹمنٹ عمل مزید شفاف بنانے کے لیے ایٹا میں اصلاحاتی ایجنڈے پر کام جاری ہے۔جلد صوبے میں ایک ہی ٹیسٹنگ ایجنسی کی تحت ریکروٹمنٹ کریں گے۔ایٹا میں افرادی قوت کی کمی پوری کرنے کے لیے پوزیشنز مشتہر کیے جائیں گے۔ایٹا نے ستمبر 2020 سے سال کے آخر تک تقریباً دو لاکھ چوبیس ہزارافراد سے ٹیسٹ لیا۔رواں سال کے جنوری میں ایک لاکھ چالیس ہزاری افراد سے ٹیسٹ لیا گیا۔انہوں نے ہدایت کی کہ کمپیوٹربیسڈ ٹیسٹنگ عمل پر بھی کام تیز کیاجائے اورپرائیویٹ ٹیسٹنگ ایجنسیز پر ریکروٹمنٹ کا دارومدار کم کیا جائے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں