0

ہوائی فائرنگ ایک قبیح، اورغیر اسلامی فعل ہے، ڈی ایس پی سٹی

ہنگو (مانند نیوز ڈیسک) ایس پی سٹی اسماعیل مروت نےکہا ہے کہ ہوائی فائرنگ ایک قبیح’ اورغیراسلامی فعل ہےجواپ کےاورعوام کےلیےجان لیوابھی ثابت ہوسکتاہے۔ڈی پی اوہنگواکرام اللہ خان کی نگرانی میں ہنگوپولیس ہوائی فائرنگ کی روک تھام کےلیےبھرپوراقدامات اٹھا رہی ہے۔ملوث افرادکےخلاف سخت قانونی کاروائی کی جائےگی۔علماءکرام اورمشران کو بھی ہوائی فائرنگ کی روک تھام کےلیے پولیس کےساتھ تعاون کویقینی بناناہوگا*۔ان خیالات کااظہارڈی ایس پی سٹی اسماعیل مروت اورایس ایچ اوسٹی ولایت شاہ خان  نےڈی ایس پی  افس میں ہوائی فائرنگ کی روک تھام کےلیے منعقدہ اجلاس میں شریک قومی مشران اورعلماءکرام سےخطاب کرتے ہوئےکیا۔ڈی ایس پی نےکہا کہ علماء کرام ہوائی فائرنگ کی روک تھام اوراس کےنقصانات کےبارے میں عوامی شعوراجاگرکرنےکےلیے نمازجمعہ کےخطبات کےدوران امن کے اس پیغام کوعام کریں کہ اسلام کاآصل پیغام ہی امن واتشی اورمحبت ہے۔ہوائی فائرنگ سےجہاں شہرکاپرسکوں ماحول خراب ہوتاہےوہاں کسی بےگناہ انسان  کی جان بھی جانےکااندیشہ ہوتاہے۔ہوائی فائرنگ غیرقانونی اورایک غیراسلامی فعل ہےجس کےخاتمہ کےلیےپولیس’علماءکرام’قومی۔مشران اورعوام کوبھرپورکرداراداکرناہوگا۔اس موقع پرڈی ایس پی نےکہا کہ علاقہ مشران اورعوام بھی اپنےگلی محلوں اورعلاقوں میں ہوائی فائرنگ کی روک تھام اوراس کےنقصانات کےبارے میں شعوراجاگرکریں۔تاکہ ہوائی فائرنگ کی روک تھام کویقینی بنایاجاسکے۔ڈی ایس پی نےکہا کہ کسی کوہنگوکاماحول خراب کرنے کی اجازت ہرگزنہیں دی جائےگی’ہوائی فائرنگ میں ملوث افرادکےخلاف سخت قانونی کاروائی کی جائےگی۔اس موقع پراجلاس میں شریک قومی مشران اورعلاقہ عمائدین سابقہ ویلیج ناظم غنی خان’نورخان’حاجی ثابت شاہ’سابقہ ویلیج ناظم سنگیڑھ  حبیب گل عرف پپو ‘سابقہ تحصیل ناظم وقاص بنگش،غلام فاروق خٹک ودیگر نےڈی ایس پی کو یقین دہانی کرائی کہ وہ سب ہوائی فائرنگ کی روک تھام اوراس کےنقصانات کےبارے میں شعوراجاگرکرنےکےلیےویلیج کونسل کی سطح پرکام کریں گے۔ علماءکرام مولاناعطاءاللہ اللہ اورمولاناارشادحسین نےکہا کہ مساجدمیں جمعہ کےخطبات میں ہوائی فاِئرنگ اوراس کےنقصانات کےبارے میں عوامی شعوراجاگرکرنےکےلیےامن کےاس پیغام کواجاگرکیاجائےگااورشہریوں کوخاص کرنوجوان نسل کو اس گھناونے اور قابل نفرت عمل کی قباحتوں سے آگاہ کیا جائے گا۔ڈی ایس پی اسماعیل مروت نے اس موقع پر ہنگو کے مشران کے علاقائی امن،مزہبی رواداری کے لیے اور اخلاقی وسماجی مسائل کے خلاف اقدامات اور جزبے کو سراہا اور کہا کہ نئی نسل ہمارا مستقبل ہے جسے صحت مندانہ سرگرمیوں کے لیے نہ صرف آمادہ کیا جائے گا بلکہ ان کی مکمل رہنمائی اور انہیں وسائل بھی فراہم کیے جائیں گئے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں