0

موجودہ عصری و دنیاوی حالات کا تقاضا ہے، حضرت مولانا محمد قاسم

شیر گڑھ (مانند نیوز ڈیسک) سابق ایم این اے اور جے یو ائی ضلع مردان کے امیر  اور دارالعلوم اسلامیہ عربیہ شیرگڑھ کے مہتمم حضرت مولانا محمد قاسم نے کہا ۔کہ موجودہ عصری و دنیاوی حالات کا تقاضا ہے۔کہ مسلم اُمہ عصری علوم کے ساتھ ساتھ اسلامی تعلیمات سے اگاہی حاصل کرکے طاغوتی قوتوں کو لگام دےسکتے ہیں۔حکمران طبقہ اسلامی مدرسوں کے خلاف گھیرا تنگ کرنے کے بجائے ان کو درپیش مسائل حل کرکے مسلمان دشمنوں کے عزائم ناکام بنادیں۔وہ پاکستان کے مشہور قدیمی دینی درسگا دارالعلوم اسلامیہ عربیہ شیرگڑھ کے 69 واں جلسہ دستار بندی و تقسیم اسناد و ختم البخاری شریف کے موقع پر خطاب کررہے تھے۔اس موقع پر مختلف دینی شعبوں سے فارغ التحصیل ہونے والے 500 طلباء کی دستار بندی کی گئ۔جس سے مولانا حافظ حبیب الحسن۔مولانا فضل ودود صندل باباجی۔مولانا عبدالسلام۔سابق ایم اے پی مولانا امانت شاہ حقانی ۔حافظ محمد سعید۔پیر طریقت شیخ عتیق الرحمان۔مولانا قیصرالدین۔اور دیگر نے خطاب کیا۔انھوں نے کہا کہ اسلامی مدرسوں سے فارغ التحصیل طلباء کے والدین اور رشتہ دار خوش قسمت ہیں۔اسے علماء کی معاشرے میں ضرورت و اھمیت سے انکار نہیں کیا جاسکتا۔جو اسلامی فلاحی ریاست بنانے میں اھم کردار ادا کرسکتاہںے۔انھوں نے کہا۔کہ سلکیٹیڈ ٹولہ یہودی لابی کے اشاروں پر پاکستانی ائین سے اسلامی دفعات کو ختم کرنے کی سازشوں میں مصروف ہے۔لیکن ھمارے ہوتے ہوئے کوئی بھی حکمران ایسا ہرگز نہیں کرسکتے۔اس موقع پر ملک و قوم کی ترقی اور اسلام کی بالادستی کےلئے خصوصی دعائیں مانگی گئ۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں