0

ہنگو میں بچی سے زبر دستی جنسی زیادتی ،ملزم کو سزائے موت کاحکم

ہنگو (مانند نیوز ڈیسک) مقامی عدالت نےبچی سےزبردستی جنسی زیادتی کےملزم کوسزائے موت کاحکم سنادیا۔3سال قبل ہنگوشہرکےنواحی علاقہ شاہووام میں کم عمربچی حنا بی بی ولدمحمداقبال کوزبردستی جنسی زیادتی کانشانہ بنایاگیاتھا۔ جس کامقدمہ باضابط طورپراسماعیل ولدمحمدامین سکنہ شاہووام کےخلاف تھانہ سٹی ہنگومیں درج کیاگیاتھا۔ تفصیلات کےمطابق ہنگووایڈیشنل سیشن جج تھری کی معززعدالت نے3سال قبل علاقہ شاہووام میں بچی سےجنسی زیادتی کےمقدمہ میں نامزد ملزم اسماعیل ولدمحمدامین کوتمام ترشواہداورثبوتDNAمیچ ہوجانے اورجرم ثابت ہونے پرسزائے موت اوردولاکھ جرمانے کےاحکامات جاری کردئیے۔جبکہ جرمانے کی عدم ادائیگی کی صورت میں ملزم کومزید چھ ماہ قیدوبند گزارنے کابھی فیصلہ سنادیاگیا۔یادرہے کہ تین سال قبل متاثرہ بچی کےوالدہ مدیحہ بی بی زوجہ محمداقبال کی مدعیت میں اسماعیل ولدمحمدامین کوزیردفعہ376/53چائلڈ پروٹیکشن ایکٹ میں ملزم نامزدکیاگیاتھا۔عدالتی فیصلہ کی روشنی میں ملزم محمداسماعیل ولدمحمدامین کوزیردفعہ 376میں سزائے موت جبکہ جرم زیردفعہ53CPAکےتحت7سال قیداوردس لاکھ روپے جرمانےکاحکم صادرفرمایاگیا۔پولیس کےمطابق واقعہ کی تفتیش زیرنگرانی ایس پی انوسٹی گیشن ہنگوارشدمحمود احسن انداز میں پایہ تکمیل تک پہنچائی گئی اورپولیس تفتیشی ٹیم نےایس پی انوسٹی گیشن ارشدمحمودکی سربراہی میں تمام وسائل بروئے کار لاتے ہوئے متاثرہ بچی کوانصاف کی فراہمی میں کلیدی کردار اداکیا۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں