0

تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر پر سیاسی سرگرمیوں میں حصہ لینے پر پابندی عائد

اسلام آباد (مانند نیوز ڈیسک) حکومت آزاد جموں کشمیر نے تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر پر آزاد کشمیر میں سیاسی سرگرمیوں میں حصہ لینے پر پابندی عائد کر دی ہے۔ محکمہ داخلہ کی طرف سے مظفر آباد، پونچھ،  اورمیر پور ڈویژنز کے کمشنرز اور پولیس سربراہان کو ایک مراسلہ روانہ کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر میں  انسداد دہشت گردی ایکٹ 2014  کے تحت ممنوعہ تنظیموں کی فہرست میں شامل ہے۔اس سلسلے میں 16 اپریل 2021 ء کو نوٹی فکیشن  بھی جاری کیا گیا ہے۔ اب اطلاعات ہیں کہ تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر، آزاد کشمیر میں انتخابی سرگرمیوں میں ملوث ہے اور اس جماعت کی طرف سے  انتخابی مہم چلائی جا رہی ہے۔ انسداد دہشت گردی ایکٹ 2014 کے تحت کالعدم قرار دی گئی کوئی بھی تنظیم سیاسی سرگرمیوں میں حصہ نہیں لے سکتی۔ چنانچہ انسداد دہشت گردی  ایکٹ 2014 کے تحت ممنوعہ تنظیم کو سیاسی سرگرمیوں سے روکا جائے۔ قانون کی خلاف ورزی پر قانونی کارروائی کی جائے۔ تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر انتخابی سرگرمیوں میں حصہ لے کر انسداد دہشت گردی ایکٹ 2014 کی خلاف ورزی کی ہے۔ محکمہ داخلہ کی طرف سے کمشنر صاحبان اور پولیس حکام سے کہا گیا ہے کہ پہلی ترجیح کے طور پر اس معاملے کو دیکھا جائے۔قابل ذکر امر یہ ہے کہ آزاد جموں کشمیر الیکشن کمیشن نے الیکشنز ایکٹ 2020 کی دفعہ 128 کے تحت 32 تنظیموں کو رجسٹر کرنے کا نوٹی فکیشن  حال ہی میں جاری کیا ہے۔ ان تنظیموں میں شمارہ نمبر 30 میں تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر کا نام بھی شامل ہے  جبکہ تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر میں بطور سیاسی جماعت الیکشن کمیشن میں رجسٹریشن حاصل کرنے کے بعد قانون ساز اسمبلی آزاد کشمیر کے  انتخابات میں بھی حصہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس سلسلے میں تحریک لبیک پاکستان آزاد کشمیر نے اپنے امیدوار بھی نامزد کئے ہیں۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں