0

نا اہل حکمرانوں کیخلاف پی ڈی ایم کی تحریک فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہونے والی ہے، امیر مقام

سوات (مانند نیوز ڈیسک) پاکستان مسلم لیگ ن صوبہ خیبر پختونخوا کے صدر انجینئر امیر مقام نے کہا ہے کہ نا اہل حکمرانوں کیخلاف پی ڈی ایم کی تحریک فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہونے والی ہے، 4 جولائی کو سوات میں پی ڈی ایم کا جلسہ موجودہ عوام دشمن حکمرانوں کیخلاف ریفرنڈم ثابت ہو گا، مسلم لیگ ن کے کارکنان اور سواتی عوام پی ڈی ایم کے جلسہ میں بھر پور شرکت کرکے موجودہ نا اہل حکمرانوں پر عدم اعتماد کا اظہار کرینگے، پی ڈی ایم کا بیانیہ اب ہر پاکستانی کا بیانیہ بن چکا ہے، موجودہ نا اہل حکمرانوں کے دن گنے جا چکے ہیں حکمران صرف جھوٹ سے کام چلا رہے ہیں، حالیہ صوبائی اور وفاقی بجٹ عوام کے ساتھ مذاق کے سوا کچھ نہیں،اب عوام کو احساس ہو رہا ہے کہ ملک کو بحرانوں سے نکالنے کی صلاحیت صرف مسلم لیگ ن اور میاں نواز شریف کی قیادت میں ہے، مستقبل پاکستان مسلم لیگ ن کا ہے کارکنان آئندہ انتخابات کی بھر پور تیاری کریں۔ وہ سنگوٹہ ہاؤس پورن سوات میں پاکستان مسلم لیگ ن کے کارکنان اور عہدیداروں سے خطاب کر رہے تھے تقریب میں کارکنوں اور عہدیداروں نے بھر پور شرکت کی بعد ازاں پاکستان مسلم لیگ ن کے صوبائی صدر انجینئرا میر مقام نے سوات سرینہ میں سوات پی ڈی ایم اجلاس کی صدارت بھی کی، جس میں جمعیت علماء اسلام (ف)، قومی وطن پارٹی، پختونخوا ملی عوامی پارٹی کے عہدیداروں نے شرکت کی اور 4 جولائی کے جلسے کیلئے لائحہ عمل طے کر دیا گیا اور کمیٹیتشکیل دی گئی  جو جلسے کے انتظامات کا جائزہ لے گی اجلاس سے خطاب کے دوران انجینئر امیر مقام کا کہنا تھا کہ موجودہ ظالم اور نا اہل حکمرانوں سے نجات حاصل کرنے کیلئے سیاسی ورکروں کے ساتھ عوام پر بھی بھاری ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ موجودہ عوام دشمن حکومت کے خلاف گھروں سے نکل آئیں اور 4 جولائی کو پی ڈی ایم کے جلسہ میں بھر پور شرکت کو یقینی بنائیں، انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم کی حکومت مخالف تحریک اب فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہو چکی ہے اور انشاء اللہ بہت جلد ان جعلی اور نا اہل حکمرانوں کا بستر گول کر دیا جائے گا۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں