0

آزاد کشمیر میں الیکشن ملتوی نہیں ہوسکتے، حاجی فضل مولا

سوات (مانند نیوز ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کے رہنماء و سابق امیدوار حلقہ پی کے 7 حاجی فضل مولا نے کبل پریس کلب میں پرہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آزاد کشمیر میں الیکشن ملتوی نہیں ہوسکتے۔منسٹر مراد سعید اور علی امین گنڈاپورپر حملہ بزدلانہ اقدام ہے۔راجہ فاروق حیدر پر بین الاقوامی عدالت میں مقدمہ چلانے کا مطالبہ کرتے ہیں۔فاروق حیدر انتخابات ملتوی کرانا چاہتا ہے جوکہ کسی صورت قبول نہیں ہے۔اس موقع پر خورشید، ڈاکٹر رحمدل، عزیزالرحمن، رسول خان، حیات خان، علی شاہ، حمید خان،عالمگیرخان،یوسف خان اور یوسف علی شاہ کے علاوہ دیگر عہدیداران سمیت کارکنان بھی موجود تھے۔ انہوں نے کہا ہے کہ آزاد کشمیر کے انتخابات کسی صورت ملتوی نہیں ہونے دینگے۔انکا یہ اقدام آئین پر حملہ ہے۔انہوں نے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ملوث افراد کے خلاف متعلقہ ادارے ایکشن لیں اور ان کو کیفر کردار تک پہنچایاجائے۔انہوں نے اپنے قائدین سے مطالبہ کرتے ہوئے کہاکہ راجہ فاروق حیدر کے خلاف عالمی عدالت میں مقدمہ چلایاجائے کیونکہ آزاد کشمیر کی عوام نے راجہ فاروق حیدر کو مسترد کردیا ہے جس کی تصدیق انہوں نے خود کی ہے۔ وفاقی وزیر برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈا پور اور منسٹر مردا سعید عوام کے دلوں کی دھڑکن ہیں۔عوام ان کے ساتھ ہیں اگر ان کو کچھ ہوا تو کشمیر میں خون کی نہریں بہہ جائیں گی جس کی تمام تر ذمہ داری راجہ فاروق حیدر پر عائد ہوگی۔راجہ فاروق حیدر ہندوستان کا ایجنٹ ہے اور ان سے پیسے کھاتاہے۔ وزیراعظم راجہ فاروق حیدر کو یہ کہتا ہوں کہ آزادکشمیر کے الیکشن میں تاخیر کا عمل کسی صورت قابل قبول نہیں ہے۔ وزیر اعظم عمران خان آزاد کشمیر میں صاف، شفاف اور بروقت الیکشن چاہتے ہیں، آزاد کشمیر الیکشن ملتوی کروانے کی تمام سازشیں ناکام بنائینگے۔اس موقع پر پاکستان تحریک انصاف کے کارکنان کثیرتعداد میں موجودتھے۔پریس کانفرنس کے بعد پریس کلب کے سامنے احتجاج کرتے ہوئے وفاقی وزیر مرادسعید اور علی امین گنڈاپور زندہ باد کے نعرے بھی لگائے گئے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں