0

نہ صرف موجود ہ حکومت اپنی مدت پورا کرے گی

لویر دیر (مانند نیوز ڈیسک) وزیر اعلیٰ خیبر پختون خوا محمود خان نے کہا ہے کہ نہ صرف موجود ہ حکومت اپنی مدت پورا کرے گی بلکہ 2023 کے انتخا بات میں بھی ملک بھر میں پی ٹی ائی کی حکومتیں بنے گی اور اگلی باری پھر پی ٹی ائی کی ہوگی ائندہ انتخابات کے لئے اپنی ہاتھوں سے میرٹ کی بنیاد پر امیدواروں کو ٹکٹ دینگے سیاسی نجومی کہہ رہے تھے کہ ان کی حکومت تین یا چھ ماہ میں ختم ہوجائیگی لیکن انہیں ما یوسی کے سوا کچھ نہیں ملا اور حکومت اپنی مدت پوری کرنے جارہی ہے ان خیالات کا اظہار انھوں نے ایم پی اے وڈیڈک چئیر مین ملک لیا قت علی خان کی دعوت پر لعل قلعہ میدان میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیا جلسہ سے وفاقی وزیر مواصلات مراد سعید، پی ٹی ائی ملاکنڈ ریجن کے صدر و ایم پی اے فضل حکیم خان، ممبر قومی اسمبلی بشیر خان، ایم پی اے وڈیڈیک چئیرمین ملک لیاقت علی خان، ممبر صوبائی اسمبلی ہمایون خان، نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر ممبر قومی اسمبلی سید محبوب شاہ، وزیر اعلیٰ کے معاون خصوصی ملک شفیع اللہ خان، اعظم خان بھی موجود تھے وزیر اعلیٰ محمود خان نے کہا کہ انہیں میدان آنے سے ڈرا یا گیا کہ حالات خراب ہے وہاں نہ جائے لیکن میں خطروں کا کھلاڑی ہوکسی سے نہیں ڈرتے موت اور زندگی اللہ تعالیٰ کے ہاتھ میں ہے انھوں نے کہا کہ ضلع دیر میں پچاس سا لوں سے سیاست پر قابض دیگر سیاسی جما عتوں نے علاقے کی تعمیر ترقی کے لئے کچھ بھی نہیں کیا پی ٹی ائی حکو مت کی پانچ سالوں کی کا رکر دگی گزشتہ پچاس سالوں سے بہتر ہے انھوں نے کہا کہ اس تاثر میں کوئی حقیقت نہیں کہ تمام میگا اور ترقیاتی منصوبے سوات منتقل کئے گئے میں صرف سوات کا نہیں پورے صوبے کا وزیر اعلیٰ ہو انھوں نے کہا کہ پی پی پی کے صوبائی صدر نجم الدین نے کہا تھا کہ اگر وزیر اعلیٰ نے پی پی پی دیر بالا سے تعلق رکھنے والے رکن اسمبلی کو فنڈز نہ دیا تو وزیر اعلیٰ کوگھر میں بند کرونگا و زیر اعلیٰ نے نجم الدین کو چیلنج کیا وہ مٹ سوات آجائے کہ وہ کس طرح مجھے گھر میں بند کرتے ہیں انھوں نے کہا کہ پا تراک دیر بالا کے عوام کی ترقیاتی منصوبو ں پر ڈاریکٹ رقم خرچ کرونگا انھوں نے کہا کہ فاٹا کا انضمام ان کی حکومت کے لئے ایک چیلنج تھی لیکن انھوں نے فاٹا کے اضلاع کو صو بہ میں ضم کیا اور فاٹا کے عوام کی محرومیوں کا خا تمہ کیا گیا انھوں نے کہا سوات موٹر وے فیز ون اور بی آر ٹی منصوبوں کا کامیابی کے ساتھ پایہ تکمیل کو پہنچا یا انھوں نے کہا کہ دیر ایکسپریس وے، پشاور سے ڈی ائی خان تک ایکسپریس وے کی منظوری دی گئی ہے چکدرہ دیر موٹروے، چترال اور گلگت بلتستان سے ہوتا ہوا سنٹرل ایشیا ممالک سے ملنے سے یہ علاقہ ترقی اور خوشحالی کے نئے دور میں داخل ہوگا اورعوام کو روزگار ملے گا اور پورا صوبہ سی پیک منصوبے سے کنکٹ ہوگا انھوں نے کہا کہ خیبر پختون خواہ دیر چترال، بنوں سمیت 17انڈسٹرئل زون کی منظوری دی جا چکی ہے انھوں نے کہا کہ لوئر دیر میں 30ارب روپے کی ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے چکدرہ میں شاہراہ کی تعمیر کے لئے کورین بنک سے معاہدہ پر دستخط ہو گئے ہیں جس پر 37ارب روپے کی لاگت ائیگی اور دیر ایکسپریس وے کا بھی جلد افتتاح ہوگا انھوں نے کہا صوبائی اور مرکزی حکومت کی باہمی اشتراک سے گوپلم ارگیشن منصوبے کا بھی منظوری ہوچکی ہے تیمرگرہ میڈیکل کالج میں ائندہ سال سے کلاسز کا اجراء ہوگا انھوں نے کہا کہ پا تراک کمراٹ کی 45کلومیٹر سڑک کی تعمیر کی بھی منظوری ہوچکی ہے جبکہ لوئر دیر کے شاہی بن شاہی، شکلئی، لڑم، جاز با نڈہ کو سیاحتی مقا مات میں شامل کیا گیا ہے انھوں نے کہا کہ ارکان اسمبلی کے ہرحلقہ میں ایک ارب روپے کی ترقیاتی منصوبے مکمل کئے جائینگے اس موقع پر وزیر اعلیٰ نے میدان میں اربوں روپے کے ترقیاتی منصوبوں کا اعلان کیا جس میں کیڈٹ کالج، سپورٹ کمپلیکس، دیر یونیورسٹی کو مکمل یونیورسٹی،کا درجہ دینے، تیمر گرہ کے لئے گریٹر واٹر سپلائی اسکیم، پانچ ارب مالیت کے گوپلم ارگیشن سکیم اور دیر موٹروے کی منظوری کا اعلان کیا جبکہ،جندول، میدان کے گریڈ سٹیشنوں اورچکدرہ اور تالاش بائی پاس پر کام تیز کرنے کا بھی اعلان کر دیا وفاقی وزیر مواصلات مراد سعید نے کہا کہ سی پیک کی مغربی روٹ کی منظوری ہوچکی ہے جبکہ چکدرہ دیر شاہراہ کی تعمیر کا منصوبہ کوریا کی تعاون سے منظو رہوچکا ہے جس کا 12اکتوبر کو ٹھیکہ دیا جائیگا جبکہ چکدرہ چترال موٹر وے کا بھی منظوری ہوچکا ہے انھوں نے کہا کہ صوبائی حکومت نے صحت انصا ف کار ڈ کے زریعے دس لاکھ روپے تک ایک غریب مریض کی علاج معالجہ پر خرچ کرے گی انھوں نے کہا کہ موجودہ حکومت سیاحت کی فروغ کے لئے کوشا ں ہے اور اس سال 27لاکھ سیاح ائے انھوں نے کہا کہ سعودی عرب میں 16272پاکستانیوں کو جیل سے رہا ئی دلوائی اور حکومت اورسیز کے مسا ئل سے بے خبر نہیں ہے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں