0

پشاور میں بجلی اور گیس کی بدترین لوڈشیڈنگ جاری، عوام کی مشکلات میں اضافہ

پشاور (مانند نیوز ڈیسک) پشاور میں بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری جبکہ سوئی گیس کے کم پریشر اور لوڈشیڈنگ نے عوام کی مشکلات مزید بڑھا دیں۔شہری مہنگے داموں ایل پی جی گیس کے استعمال پر مجبور ہو گئے۔تفصیلات کے مطابق صوبائی دارالحکومت پشاورمیں بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے اور اندرون شہری علاقوں ہشت نگری،لاہوری،شادی پیر،جھنڈا بازار،کریم پورہ،مینا بازار اور گھنٹہ گھر سمیت بیشتر علاقوں میں صبح 8بجے سے شام 4بجے تک مسلسل 8گھنٹے لوڈشیڈنگ معمول بن گیا ہے اور ایک دن کے وقفے سے مسلسل آٹھ گھنٹے لوڈشیڈنگ کے باعث جہاں گھریلو امور بری طرح متاثر ہورہے ہیں وہیں کاروباری سرمیاں بھی ٹھپ ہو کر رہ گئی ہیں جبکہ دوسری جانب شہر کے مضافاتی علاقوں بڈھ بیر،پشتہ خرہ،باڑہ روڈ،شیخان،سنگو،سربند،چمکنی اور ناصر پور میں لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 12گھنٹوں سے تجاوز کر گیا ہے جہاں بجلی مہمان بن کر رہ گئی ہے۔اسی طرح اندرون شہر سوئی گیس کے کم پریشر اور لوڈشیڈنگ کی وجہ سے بھی شہریوں کی مشکلات میں مزید اضافہ ہو گیا ہے اور لوگ مجبوری کے باعث مہنگی ایل پی جی استعمال کر رہے ہیں۔شہریوں نے حکومت،واپڈا اور سوئی گیس کے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور پر عوام کو ریلیف کے لئے اقدامات اٹھائے جائیں بصورت دیگر احتجاج پر مجبور ہو جائیں گے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں