0

سود کاروباری اللّٰہ سے کھلے عام جنگ ہے

  ہنگو (مانند نیوز ڈیسک) سود کاروباری اللّٰہ سے کھلے عام جنگ ہے۔اسلامی بینکاری کی وجہ سے بہت سے لوگ سودی نظام سے چھٹکارا حاصل کرسکتے ہیں۔مفتی فضل حکیم و دیگر کا سیمنار سے خطاببنک اف خیبر دوابہ برانچ کے زیراہتمام اسلامی بینکاری کے حوالے سے سیمنار کا انعقاد کیا گیا۔سیمنار میں شرعی بورڈممبران عبدالحلیم خان۔مفتی فضل حکیم۔مفتی محمد عارف۔مینجر محمد شاہد اور سابقہ ضلعی ناظم مفتی عبیداللہ سمیت کثیرتعداد میں سماجی و سیاسی شخصیات اور مقامی مشران نے شرکت کی۔سیمنار سے مفتی فضل حکیم۔عبدالحلیم اور مفتی عبیداللہ نے خطاب کرتیہو?ے کہا کہ بنک اف خیبر نے اسلامی بینکاری شروع کرکے ایک اہم اقدام اٹھایا ہے۔جو لوگ بنک کے نام سے دور بھاگتے تھے وہ لوگ بھی اسلامی بینکاری سے استفادہ حاصل کرسکتے ہیں۔ان کا مذید کہنا تھا کہ سودی کاروبار ایک لعنت ہے اور سود کرنے والے کھلے عام اللہ تعالیٰ سے جنگ کا اعلان کرتے ہیں۔جید علماء کرام کا شرعی لحاظ سے اسلامی بینکوں کی سرپرستی کرنا اس بات کا ثبوت ہے کہ بنک کوئی بُری چیز نہیں لیکن ان میں سودی کاروبار کرنا بُری چیز ہے۔مفتی فضل حکیم کا کہنا تھا کہ اسلامی اصولوں کے مطابق بنک میں پیسے رکھنا یا بینکوں کیساتھ کاروبار کرنا جائز ہے۔سیمنار کے آخر میں شرعی بورڈ ممبر مفتی فضل حکیم نے شرکاء کے سوالات کے جوابات بھی دئے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں