0

ایبٹ آباد کیمپس کے تیسرے ایلومنائی ری یونین کا انعقاد

کامسیٹس یونیورسٹی اسلام آباد (مانند نیوز ڈیسک) ایبٹ آباد کیمپس کے تیسرے ایلومنائی ری یونین کا انعقاد کیا گیا جس کے مہمان خصوصی میجر جنرل عمر بخاری کمانڈنٹ پی ایم اے کاکول تھے۔ اس موقع پر اپنے خطاب میں انہوں نے کہا کہ کامسیٹس یونیورسٹی ملکی اور غیر ملکی یونیورسٹیز میں ایک نمایاں مقام رکھتی ہے۔ ملک کی ترقی میں نوجوانوں کا کردار بہت اہم ہے مجھے یہ دیکھ کر بہت خوشی ہوئی کہ یہاں پر غیر ملکی طلباء و طالبات بھی تعلیم حاصل کررہے ہیں۔ جس سے ملک کا نام دنیا بھر میں روشن ہورہا ہے طلباء کی سلاحیتوں کو نکھرانے میں بنیادی ذمہ داری اساتذہ پر عائد ہوتی ہے۔ ایک اچھا اُستا د شخصیت ساز معاشرہ اور قوم کامعمار ہوتاہے۔ اس ملک کی حفاظت کے لئے پاک فوج ہر وقت تیارہے۔ ہمارا کامسیٹس کے ساتھ ہمیشہ تعلق رہے گا۔ اس ادارے کی بہتری کے لئے ہم ہر ممکن کوشش کریں گے انہوں نے مزید ضرب المثل بات کہی کہ   ”انسان اگر اچھا دوست نہیں بن سکتا تو وہ ایک اچھا انسان بھی نہیں بن سکتا“۔    کامسیٹس یونیورسٹی اسلام آباد کیمپس کے ڈائریکٹر پروفیسر ڈاکٹر امتیاز علی خان نے اپنے خطاب میں کہا کہCUI، ایبٹ آباد کیمپس اپنے آغاز سے ہی ترقی اور عزم کا مترادف نام ہے۔جو ابھی، 18 انڈرگریجویٹ اور 24 گریجویٹ پروگراموں کے ساتھ 6000 سے زیادہ طلباء کو معیاری تعلیم فراہم کر رہا ہے۔ 2001 میں صرف 121 طلباء کے ابتدائی داخلے کے بعد سے کیمپس نے تیزی سے ترقی کی۔ ہماری فیکلٹی 590 اعلیٰ تعلیم یافتہ اورہنرمند اساتذہ پر مشتمل ہے جس میں 200 سے زیادہ پی ایچ ڈی ڈگری کے حامل ہیں۔ ہمارے فیکلٹی ممبران کو مختلف قومی اور بین الاقوامی اعزازات سے نوازا گیا ہے جن میں ہلال امتیاز، ستارہ امتیاز، تمغہ امتیاز، 4 پرائیڈ آف پرفارمنس اور 2 PAS گولڈ میڈلز شامل ہیں۔ اس کے علاوہ ہمارے بہت سے فیکلٹی ممبران کو ایچ ای سی کی جانب سے بہترین یونیورسٹی اساتذہ کے ایوارڈز سے نوازا گیا ہے۔ ہمارے طلباء کے ساتھ ساتھ چین، شام، نائیجیریا، اور افغانستان وغیرہ سمیت مختلف ممالک کے بین الاقوامی طلباء بھی مختلف گریجویٹ اور انڈر گریجویٹ پروگراموں میں اپنی تعلیم جاری رکھے ہوئے ہیں۔مجھے آج ایلومنائی ری یونین کے موقع پرخطاب کرتے ہوئے بے حد خوشی ہو رہی ہے جس کا اہتمام ہمارے سابق طلباء کو ان کے المامٹر سے دوبارہ جوڑنے کے لیے کیا گیا ہے۔ اپنے شاندار ماضی کو یادگار بنانے، اپنی موجودہ کامیابیوں کا جشن منانے اور روشن مستقبل کے لیے پیشہ ورانہ نیٹ ورکنگ کو مضبوط کرنے کے لیے۔ ری یونین بہت اہمیت رکھتی ہے کیونکہ یہ اپنے آپ کو پرکھنے اورخود پر غوروحوض کرنے کا موقع فراہم کرتی ہیں ہم ترقی کررہے ہیں اور میں بطور ڈائریکٹر اس رفتار کو بڑھانے میں اپنا کردار ادا کررہاہوں اور کرتا رہوں گا۔ تاکہ اس ادارے کے ساتھ ساتھ ہمارا ملک بھی ترقی کرے۔ اس موقع پر تقریب کنوینئر ڈاکٹر عزیز اللہ سیال نے کہاکہ آپ کی کامیابیوں پر یونیورسٹی آپ پر فخر کرتی ہے۔ ان فخر کے لمحات میں کبھی اپنے ان اساتذہ کو نہ بھولیں جنہوں نے آپ کی تقدیر کو ایک کامیاب بزنس مین، فنکار، سماجی کارکن، پالیسی ساز، معلم، انجنیئر، آئی ٹی کا ماہر اور راہنما کی صورت میں ڈھالا تاکہ آپ مقامی سطح سے عالمی سطح پر اپنا لوہا منواسکیں۔ میں آج آپ کو بطور اُستاد  دعوت دیتا ہوں کہ آپ اس ادارے کی مزید ترقی میں ہمارے شانہ بشانہ کھڑے ہوں تاکہ یہ ادارے آپ کے تعاون اور قیمی رائے کے زریعے ملکی اور غیر ملکی سطح پر نمایاں مقام حاصل کرسکے اور انسانی ترقی کے لئے اس ادارے کو ایک پاور ہاؤس کادرجہ دے دیں۔ ہمیں آپ پر اور آپ کی کامیابیوں پر فخر ہے جو آپ نےCUIسے حاصل کی ہیں۔ اور اس بات پر بھی فخر ہے کہ آپ آج بھیCUIکو اپنا ادارہ سمجھتے ہیں اور اس کا ترقی وخوشحالی میں اپنا حصہ ڈالتے ہیں اور اس چیز کا مظاہرہ آپ لوگ اپنے اپنے پیشہ ورانہ اداروں میں رہ کر کررہے ہیں۔ یقینا آپ لوگ اپنی اپنی فیلڈ میں کام کررہے ہیں مگر ہر فیلڈ میں آپ کی کامیابی CUIکی کامیابی ہے۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں