0

چین کثیرالجہت تجارتی نظام کا بھرپور تحفظ کرے گا، چینی وزیر اعظم

بیجنگ (مانند نیوز ڈیسک) چینی وزیر اعظم لی کی کیانگ نے کہا ہے کہ چین کثیرالجہت تجارتی نظام کا بھرپور تحفظ کرے گا، رواں سال چینی معیشت بخوبی ترقی کر رہی ہے اور اہم اہداف کو پورا کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے، چین اعلیٰ معیار کے کھلے پن کو جاری رکھے گا، کثیرالجہت تجارتی نظام کا بھرپور تحفظ کرے گا اور تجارت و سرمایہ کاری کی آزادی و سہولیات کو فروغ دے گا۔ چینی وزیر اعظم نے عالمی اقتصادی بحالی کے لیے سازگار ماحول پیدا کرنے کی خاطر مختلف فریقوں کیساتھ رابطے اور تعاون کو مضبوط بنانے کی خواہش کا بھی اظہار کیا۔چینی وزیر اعظم لی کی کیانگ نے ویڈیو کانفرنس کے ذریعے بڑے بین الاقوامی اقتصادی اداروں کے رہنماؤں کے ساتھ چھٹی “1+6” گول میز کانفرنس کا انعقاد کیا،جس میں،ورلڈ بینک کے صدر ڈیوڈ مالپاس، بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کی منیجنگ ڈائریکٹرکرسٹالینا جارجیوا، ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن کی ڈائریکٹر جنرل نگوزی اوکونجو، انٹرنیشنل لیبر آرگنائزیشن کے ڈائریکٹر جنرل گائے رائڈر،اقتصادی تعاون وترقی کی تنظیم کے سیکرٹری جنرل میتھیاس کورمن شریک تھے۔کانفرنس میں عالمی اقتصادی بحالی،وبا کے بعد پائیدار ترقی اور چینی معیشت کی مستحکم ترقی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔لی کی کیانگ نے کہا کہ رواں سال چینی معیشت بخوبی ترقی کر رہی ہے اور اہم اہداف کو پورا کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔انہوں نے کہا کہ چین اعلیٰ معیار کے کھلے پن کو جاری رکھے گا، کثیرالجہت تجارتی نظام کا بھرپور تحفظ کرے گا اور تجارت و سرمایہ کاری کی آزادی و سہولیات کو فروغ دے گا۔انہوں نے عالمی اقتصادی بحالی کے لیے سازگار ماحول پیدا کرنے کی خاطر مختلف فریقوں کیساتھ رابطے اور تعاون کو مضبوط بنانے کی خواہش کا بھی اظہار کیا۔عالمی اقتصادی اداروں کے رہنما ؤں نے وبا کے اثرات کے باوجود چینی معیشت کی مستحکم ترقی سے عالمی اقتصادی بحالی کیلئے مثبت کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ وہ چین کے ساتھ عالمی معیشت کی مضبوط،اشتراکیت پر مبنی  پائیدار ترقی کے لیے تعاون کو فروغ دینے کے خواہش مند ہیں۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں