0

ایبٹ آباد کامسیٹس یونیورسٹی میں عالمی یوم ماحولیات کے موقع پر تقریب

ایبٹ آباد (نمائندہ مانند) ایبٹ آباد شہر کے ماحول کو بہتر اور خوشگوار بنانے کیلئے واسا ایبٹ آباد اور کامسیٹس یونیورسٹی کے اشتراک سے عالمی یوم ماحولیات کے موقع پر ایک پروقار تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں ایبٹ آباد شہر کو موجودہ ماحولیاتی آلودگی کے حوالے سے درپیش چیلنجوں پر تفصیلی بات چیت کی گئی۔تقریب میں ماحولیاتی ماہرین کیساتھ ساتھ ڈائریکٹر کامسیٹس، فیکلٹی ممبران، طالب علم، واسا ایبٹ آباد، انوائرومینٹل پروٹیکشن ایجنسی اور ورلڈ وائڈ فنڈ(ڈبلیو ڈبلیو ایف) کے نمائندوں نے شرکت کی۔ہر سال پوری دنیا میں 5جون کو ماحولیات کا عالمی دن منایا جاتا ہے جس کا مقصد ماحول کو آلودہ ہونے سے بچانے کے لئے آگاہی سیمینار اور تقاریب کا انعقاد کیا جاتا ہے۔تفصیلات کے مطابق کامسیٹس ایبٹ آباد اور واٹر اینڈ سینی ٹیشن سروسز کمپنی ایبٹ آباد (WSSCA)نے مشترکہ طور پر عالمی یوم ماحولیات کے مناسبت سے تقریب کا اہتمام کیاجس میں ڈائریکٹر کامسیٹس پروفیسر ڈاکٹرمعروف شاہ، مختلف شعبوں کے فیکلٹی ممبران، طلباء وطالبات، واسا ایبٹ آباد، ادارہ برائے تحفظ ماحولیاتاور ورلڈ وائڈ فنڈ کے نمائندگان نے شرکے کی۔ تقریب میں ماحول کو آلودگی سے بچانے کے حوالے سے بات چیت کی گئی اور ننھے بچوں نے خاکے پیش کئے جس میں صاف ستھرا ماحول کی اہمیت کو اُجاگر کیا گیا۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے واٹر اینڈ سینی ٹیشن سروسز کمپنی ایبٹ آباد کے ترجمان عمر سواتی نے ماحول کو صاف ستھرا رکھنے کے حوالے سے درپیش چیلنجز، مسائل اور عوامی رویوں کے حوالے سے تفصیلی بات چیت کی۔ اُن کا کہنا تھا کہ ہوا، پانی اور زمین کو آلودہ کیا جا رہاہے جس سے انسانوں، جانوروں اور ابی حیات کے لئے خطرات دن بدن بڑھتے جارہے ہیں، نامناسب مقامات پر کوڑا کرکٹ پھینکنا معمول بنتا جارہاہے جس سے مختلف بیماریاں بھیل رہی ہیں۔ نالیوں اور نالوں سے واٹر سپلائی لائنیں گزارنے سے پینے کا صاف پانی آلودہ ہورہاہے اور نتیجتاً پیٹ کی بیماریوں میں اضافہ ہورہاہے۔ جنگلات کو آگ لگانے سے جنگلی حیات اورجنگلات کے خاتمے کے ساتھ ساتھ سانس کی بیماریوں میں اضافہ ہورہاہے۔ترجمان واسا نے حکومت خیبر پختون خواہ کی جانب سے ماحول کو صاف ستھرا رکھنے کے لئے اُٹھائے گئے اقدامات بالخصوص خیبر پختون خواہ سیٹیز امپروومنٹ پروجیکٹ کے تحت شروع ہونے والے منصوبوں کی تفصیلات سے آگاہ کیا۔ اُنہوں نے طالب علموں سے اپیل کی کہ عوامی آگاہی کے لئے اپنا کردار ادا کریں تاکہ ایبٹ آباد کے شہریوں اورسیاحوں کو صاف ستھرا ماحول فراہم کیا جا سکے۔ عمر سواتی نے ہوائی، زمینی اورآبی آلودگی ختم کرنے اور مختلف چیلنجز سے نمٹنے کے لئے واسا ایبٹ آباد کی کاکردگی پر بھی روشنی ڈالی۔ یوم ماحولیات کے حوالے سے پیغام دیتے ہوئے ترجمان واسا عمر سواتی نے کہاکہ اگر آپ گرمی سے تنگ ہیں، اگر آپ کو پرندے اور پھل پسند ہیں تو درخت لگائیں اور اگر آپ کو زندگی پسند ہے تو بہت سارے درخت لگائیں۔ ڈائریکٹر کامسیٹس ایبٹ آبادپروفیسر ڈاکٹر معروف شاہ نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ انوائرومینٹل سائنسزڈیپارٹمنٹ کے فیکلٹی ممبران اور طلباء ماحول کو رہائش کے لئے سازگار بنانے کے لئے اپنا کردار ادا رہے ہیں اور تمام اداروں کے ساتھ مل کرکام کرنے کے لئے تیار ہیں۔اُنہوں نے کہا کہ کامسیٹس ایبٹ آباد کے پاس بہترین ماہرین ماحولیات ہیں جو اپنی تحقیق اورآراء کے ذریعے سے اپنا بھر پور کردار ادا کررہے ہیں۔کامسیٹس ایبٹ آباد واٹر اینڈ سینی ٹیشن سروسز کمپنی ایبٹ آباد کے ساتھ مل کر کام کرنے کے لئے پُر عزم ہے اورجلد ہی دونوں اداروں کے درمیان مفاہمت کی یادداشت پر دستخط ہوجائیں گے جس سے مل کر کام کرنے میں آسانی ہوگی۔پروفیسر معروف شاہ نے تقریب کے آرگنائزرز کو کامیاب پروگرام کرانے پر مبارک باد دی اوراسی طرح کام جاری رکھنے کی اُمید ظاہر کی۔ تقریب سے ورلڈ وائڈ فنڈ اور ادارہ برائے تحفظ ماحولیات کے نمائندوں نے بھی خطاب کیا اور اپنے اپنے اداروں کی جانب سے ماحول کی بہتری کے لئے کی گئی اقدامات کے حوالے سے تفصیلات بتائیں۔تقریب کے اختتام پر چیئرمین انوائرومینٹل سائنسز ڈیپارٹمنٹ پروفیسر ڈاکٹر محمد اراشاد نے تمام شرکاء کا شکریہ ادا کیا اور تعریفی اسناد اور یادگاری شیلڈز تقسیم کی۔

خبر پر آپ کی رائے

اپنا تبصرہ بھیجیں