0

ملاکنڈ‌ڈویژن کی طرح جامشورو یونیورسٹی میں‌بھی طالبات کو حراسا کردیا گیا

جامشورو(مانند نیوز ڈیسک)مہران یونیورسٹی آف انجینٸرنگ اینڈ ٹیکنالوجی جامشورو میں طالبات کو ہراساں کرنے کا انکشاف ہوا ہے۔طالبات کو ہراساں کرنے کے الزام میں انفارمشن ٹیکنالوجی (آئی ٹی) شعبے کے سینئر اسسٹنٹ کو معطل کرکے تحقیقات شروع کردی گئیں۔مہران یونیورسٹی انتظامیہ کے مطابق طالبات کی تحریری شکایت پر وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر طحہ حسین نے تین رکنی اینٹی ہراسمنٹ کمیٹی تشکیل دے دی ہے۔سینٸر آئی ٹی اسسٹنٹ پر طالبات کو ہراساں کرنے کے سنگین الزامات عاٸد کیے گئے ہیں، جس پر اینٹی ہراسمنٹ کمیٹی کی سفارش اور سنڈیکیٹ چیٸرمین کے حکم پر رجسٹرار نے سینئر آئی ٹی اسسٹنٹ کی معطلی کا نوٹیفکیشن جاری کردیا۔یونیورسٹی حکام کے مطابق اینٹی ہراسمنٹ کمیٹی نے معاملے کی تحقیقات شروع کرکے شکایت کنندہ طالبات کے بیانات قلمبند اور ثبوت جمع کرلیے ہیں جبکہ معطل اسسٹنٹ کا بیان بھی قلمبند کیا جاٸے گا۔

Share and Enjoy !

Shares

اپنا تبصرہ بھیجیں