0

ترکی مقبول ترین سیاحتی ملک بننے کی فہرست میں فرانس کو پیچھے چھوڑنے لگا

انقرہ (مانند نیوز ڈیسک)ترکی مقبول ترین سیاحتی ملک بننے کی فہرست میں فرانس کو پیچھے چھوڑنے لگا۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق فرانس، اسپین کے بعد چھٹیاں گزارنے کے لیے دوسری مقبول ترین منزل ترکی بننے لگا کیونکہ اس کی سرحدیں یورپ اور ایشیا تک پھیلی ہوئی ہیں۔کورونا سے پہلے کے مقابلے میں سیاحوں میں غیرمعمولی 70 فیصد اضافہ دیکھا ہے جبکہ 2022 میں 44.6 ملین سیاحوں نے ترکی کا دورہ کیا۔سیاحتی اداروں ڈبلیو ٹی ایم اور ٹورازم اکنامکس کے اعداد و شمار کے مطابق مذکورہ تعداد 2023 میں 50 ملین سیاحوں تک پہنچنے والی ہے، ترکی اپنی خوبصورتی کی وجہ سے مشہور ہے۔اس کے علاوہ 2022 میں ترکی نے 12 لاکھ علاج کے لئے آنے والے سیاحوں کا خیرمقدم کیا اور 2023 کی پہلی ششماہی میں سات لاکھ 46 ہزار290 پہلے ہی وہاں پہنچ چکے ہیں۔ہیئر ٹرانسپلانٹیشن اور کاسمیٹک دندان سازی میں علاج کے حوالے سے ترکی سرفہرست ہے، اس کے بعد لیزر سے آنکھ کی اصلاح اور وزن کم کرنے کی سرجری بھی شامل ہے۔ترک ڈینٹل ایسوسی ایشن کے مطابق ہرسال 250000تک غیرملکی مریض کاسمیٹک دندان سازی کے لئے ترکی آتے ہیں۔استنبول میں صرف اگست میں 17 لاکھ سے زائد سیاحوں کی آمد ہوئی، جو ہیئر ٹرانسپلانٹیشن کے خواہاں مردوں کے لیے خاص طور پر مقبول ہے۔برٹش ٹریول ایجنٹوں کی ایسوسی ایشن کے مطابق ترکی برطانوی سیاحوں میں تیزی سے مقبول ہوتا جا رہا ہے اور اب یہ آٹھویں سب سے زیادہ دیکھی جانے والی منزل ہے۔دفتر خارجہ نے کہا کہ 25 سے زائد برطانوی شہری جنوری 2019 سے ترکی علاج کی غرض سے گئے تھے، جن کی موت ہوچکی ہے۔

Share and Enjoy !

Shares

اپنا تبصرہ بھیجیں