کشمیر دنیا کا سب سے بڑا جیل بن گیا

بدھ 12 فروری 2020


دیربالا (مانند نیوز ڈیسک) پانچ اگست 2019سے مسلسل کر فیوکے نتیجے میں 80لاکھ کشمیریوں کو گھروں میں محصور کر کے کشمیر کو دنیا کا سب سے بڑا جیل بنا دیا گیا ہے۔بھارتی حکومت کا یہ اقدام اقوام متحدہ کے قراردادوں کی نفی ہے۔لیکن امن کے دعویدار دنیا بھارت کے اس ظالمانہ اقدام پر مکمل خاموش ہے۔ان خیالات کا اطہار تنظیم اساتذہ پاکستان خیبر پختونخوا کے صدر خیر اللہ خان حواری یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے مختلف علاقوں میں منعقدہ تقریبات سے اپنے خطاب میں کیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ بھارتی انتہا پسندی سے اب تک ایک لاکھ سے زائد کشمیری شہید ہو چکے ہیں،کئی لوگوں کے گھروں کو کنڈر بنا یا جا چکا ہے۔اور اس وقت بھارت کے بارہ لاکھ فوج کشمیر میں ظلم کی انتہا کر چکے ہیں۔لیکن کشمیر کے نہتے،ایمان سے سر شارعوام اس ظلم کا جر ات کے ساتھ مقابلہ کر رہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ پوری امت مسلمہ اتحاد کے ساتھ کشمیریون کے ساتھ کھڑے ہیں۔اور وہ دن دور نہیں کہ کشمیر بھارت کیلئے قبرستان بن کے رہے گا۔انہوں نے اسلامی ممالک سے در خواست کی کہ مسلم ممالک بھارت اور ان کے پشت پر کھڑے مسلمان دشمن ممالک کے ساتھاس وقت تک تعلقات منقطع کر لے جب تک کشمیریوں کی حق خود ارادیت حاصل نہ ہو۔انہون نے کہا کہ ہم زندگی کے آخری دم تک کشمیریوں کی حمائت جاری رکھیں گے۔یکجہتی کشمیر تقریبات سیپرنسپل جہانگیر خان،عتیق الر حمان،سکندر خان،مصباح الاسلام،فردوس خان خلیل،میاں ضیاء الر حمان،صاھبزادہ صادق جان،سید محمد شاہ با چا اور بختیار زمین خان نے بھی خطاب کیا۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Developed by : Murad Khan