سوات،کوروناسےنمٹنے کیلئےکئےگئے اقدامات پرتفصیلی دی،ڈپٹی کمشنر

منگل 31 مارچ 2020


الپوری (مانند بنیوز ڈیسک) شانگلہ کے ڈسٹرکٹ پولیس افیسر ملک اعجاز نے کہا ہے کہ پولیس جوانوں کو ہر صورت محفوظ بنایا جائے گا اس وقت پولیس بھی فرنٹ لائن کا کردار ادا کر رہی ہیں،شانگلہ کے ایک ہزار سے زائد پولیس جوانوں کو پیراشوٹ کپڑے سے بنائی گئی یونیفارم اور دیگر مکمل حفاظتی کٹس فراہم کئے جائینگے جوانوں کے صحت پر کسی قسم کا سمجھوتا نہیں کیا جائے گا ضلع بھر کے گیارہ تھانوں میں ابتدائی طور پر تیس تیس کٹس فراہم کئے جائینگے جبکہ ضلع کے داخلی اور خارجی چیک پوائنٹس پر تعینات جوانوں کوہر صورت محفوظ بنایا جائے گا۔تھانوں کو کٹس فراہم کئے گئے ہیں تاکہ علاقوں کی سیلنگ کے وقت جوان محفوظ رہیں۔لاک ڈاؤن کے دوران عوامی تعاون ناگزیر ہے عوام پندرہ دن گھروں سے نہ نکلیں تو موزی مرض کا خاتمہ ہی ممکن ہو سکے گا لاک ڈاؤن کے خلااف ورزی اور باہر سے شانگلہ داخل ہوکر اپنے اپ کو چپھانے والوں کے خلاف بلا تفریق کاروائی ہوگی۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے پیر کے روز اپنے دفتر میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔ پریس کانفرنس میں ڈی ایس پی ہیڈ کوارٹر نصیب شاہ،پے آفیسر فخر عالم و دیگر بھی موجود تھے۔ اس موقع پر موجود تیس پولیس  جوانوں کو یونیفارم اور کٹس فراہم کئے گئے اور ان کا معائنہ بھی کیا گیا۔ڈی پی او شانگلہ نے جوانوں کی بقایہ کمیاں کو پورا کرنے کیلئے حکام کو ہدایت کر دی۔ڈی پی او شانگلہ نے عوام سے اپیل کرتے ہوئے اس نازک صورت حال میں شانگلہ پولیس اور انتظامیہ کی جانب سے جاری احکامات پر عمل یقینی بنائیں۔ کورونا وائرس کے روک تھام میں اس وقت تمام سٹیک ہولڈر کو ملکر کام کرنا چایئے تاکہ موزی مرض سے علاقہ اور ملک نجات پائے۔ ادھر شانگلہ پولیس کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق کوروناسے بچنے کیلئے چینی طرز کا سوٹ تیار کر لیا، اس سلسلے میں شانگلہ پولیس نے پہلے مرحلے میں پانچ سو،سوٹ تیار کر لئے گئے ہیں جو قرنطینہ،داخلی اور خارجی راستوں اور متاثرہ علاقوں میں ڈیوٹی دینے والے اہلکار استعمال کریں گے۔،کورونا وائرس سے بچاؤ کیلئے یہ اقدام اٹھا یا گیا مزید اہلکاروں کے لئے بھی حفاظتی یونیفا رم تیار کئے جائینگے۔ ضلع بھر میں داخلی و خارجی راستوں میں ناکہ بندی کے دوران قائم شدہ قرنطینہ سنٹرز میں تعینات پولیس جوانان یہ یونیفارم پہنائیں گے، تاکہ خود بھی اس وباء سے بچ کر عوام کی خدمت میں سرشار رہے۔ کورونا سے بچاؤ کیلئے شانگلہ پولیس کے لئے حفاظتی سوٹ تیارکرکے۔ ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر ملک اعجاز نے اپنی ذمہ داری ثابت کر دی۔ ڈی پی او شانگلہ نے اس بچاؤ کیلئے چائینہ طرز کے حفاظتی سوٹ تیار کر لئے ہیں۔ یونیفارم سر،پاؤں، ہاتھوں سمیت پورے جسم کو وائرس سے محفوظ کرنے کیلئے استعمال ہوں گے۔ ڈ ی پی او ملک اعجاز نے کہا کہ پہلے مرحلے میں پانچ سو سوٹ تیار کئے گئے ہیں جو سیکورٹی پر مامور پولیس اہلکار استعمال کریں گے جبکہ ضلع بھر کے قرنطینہ سنٹرز میں ڈیوٹی پر موجود اہلکاروں کیلئے بھی سینکڑوں سوٹ تیار کئے جائینگے۔ خصوصی پر بنائیں گئے یونیفارم پولیس لائن کے انٹری پوائنٹس،لاک ڈاؤن والے علاقوں، مخصوص چیک پوائنٹس پر موجود اہلکاروں کودیئے جائیں گے۔ پولیس اہلکاروں کو کورونا وائرس سے بچاؤ اور دوران ڈیوٹی حفظان صحت کے اصولوں کو مدنظر رکھتے ہوئے اقدام اٹھایا گیا۔یونیفارم کے علاوہ تمام پولیس آفیسران اور جوانوں میں ہینڈ سنیٹائزرز، سرجیکل ماسک اوردستانے بھی تقسیم کئے گئے۔ ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر نے پریس کانفرنس میں بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ کورونا وائرس سے بچاؤ کیلئے  انسپکٹر جنرل پولیس آف خیبر پختونخواہ اور ریجنل پولیس آفیسر ملاکنڈ محمد اعجاز خان کی ہدایت پرشانگلہ پولیس کی حفاظت اولین ترجیح سمجھ کر ان کیلئے چینی طرز سوٹ تیار کر لیئے ہیں، شانگلہ پولیس دن رات چوکس اور بیدار ہے فرنٹ لائن پر کورونا کے خلاف جنگ لڑ رہی ہے۔ انھوں نے میڈیا کے نمائندے کی ایک سوال پر کہا کہ جب ڈیوٹی ختم ہوجائے تو سوٹ نکال کر اس پر سپرے کریں گے تو یہ سوٹ دوبارہ نیا تصور ہوگا کیونکہ ان پر سپرے ہونے کے بعد جراثیم ختم ہو جائے گے۔ ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر ملک اعجاز نے صحافیوں کی کردار کو بھی خوب سراہا۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Developed by : Murad Khan