صوبے میں کورونا سے مزید23مریض انتقال کرگئے

منگل 02 Jun 2020


کراچی (مانند نیوز ڈیسک) وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ گذشتہ 24گھنٹوں میں صوبہ سندھ میں 1439نئے کیسز سامنے آئے ہیں جبکہ صوبہ میں مزید 23مریض کورونا کے باعث انتقال کرگئے،اس وقت 358مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔64مریض وینٹی لیٹرز پر ہیں۔جبکہ 953مریض صحتیاب ہوکر گھروں کو چلے گئے۔منگل کے روز وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ کا کورونا وائرس کی صورتحال سے متعلق بیان میں کہنا تھا کہ گذشتہ 24گھنٹوں میں 5454ٹیسٹ کئے گئے جس میں 1439کیسز آئے۔ابتک 192546ٹیسٹ کئے گئے، جس میں 31086 مریض ظاہر ہوئے ہیں۔آج 23مریضوں کے انتقال سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 526ہوگئی ہے۔اس وقت 15022 مریض زیرعلاج ہیں۔سید مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ 13813مریض گھروں اور 111آئسولیشن مراکز پر زیرعلاج ہیں۔اس وقت 1098مریض مختلف اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں۔آج 953مزید مریض صحتیاب ہوگئے۔سندھ میں ابتک 15538مریض صحتیاب ہو چکے ہیں۔صوبہ بھر کے 1439کیسز میں سے کراچی میں 1035نئے کیسز رپوٹ ہوئے۔کورنگی میں 263، ضلع شرقی میں 242اور ضلع وسطی 166مزید کیسز ظاہر ہوئے۔ضلع جنوبی میں 167، ملیر میں 139اور غربی میں 58نئے کیسز سامنے آئے ہیں۔لاڑکانہ میں 50، حیدرآباد میں 47اور سکھر میں 40نئے کیسز رپورٹ ہوئے۔خیرپور میں 33،گھوٹکی میں 27اور شہید بینظیرآباد میں 17مزید کیسز ظاہر ہوئے۔ بدین میں 15، سانگھڑ میں 13اور جامشورو میں 9نئے کیسز سامنے آئے۔قمبر میں 6جبکہ سجاول اور شکارپور میں 5،5مزید کیسز رپورٹ ہوئے۔جیکب آباد اور دادو 3،3جبکہ کشمور میں 2نئے کیسز ظاہر ہوئے۔ سید مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ مٹیاری، ٹنڈومحمد خان اور عمر کوٹ میں ایک ایک کورونا کیس رپورٹ ہوا۔ وزیراعلی سندھ نے عوام سے  اپیل کی ہے کہ وہ لاک ڈاؤن میں دی گئی سہولیات کا غیرضروری فائدہ نہ اٹھائیں،عوام کی صحت حکومت کی ترجیح ہے۔ایس او پیز پر صحیح  عمل نہ کرنے سے کیسز بڑھتے جارہے ہیں۔وزیراعلیٰ سندھ نے عوام  سے اپیل کی ہے  کہ ایس او پی پر عمل کر کے اپنی صحت کو یقینی بنائیں۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Developed by : Murad Khan