آٹھ لاکھ بھارتی قابض فوج نے80لاکھ کشمیریوں کویرغمال بنایاہواہے،عمران خان

ہفتہ 11 Jul 2020


اسلام آباد (مانند نیوز ڈیسک) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ آٹھ لاکھ بھارتی قابض فوج نے 80لاکھ کشمیریوں کویرغمال بنایاہواہے،آج کشمیریوں کو مشکلات کا سامنا ہے، مقبوضہ کشمیر میں بھی اسی طرح کے قتل عام کاخدشہ ہے جس طرح 25سال قبل سریبر ینیکا  میں ہوا۔ عالمی برادری یقینی بنائے کہ ایسے واقعات دوبارہ نہ ہوں۔اپنے ویڈیو پیغام میں وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ آج سریبر ینیکا میں ہونے والی نسل کشی کی 25ویں  برسی ہے، مجھے یہ دن بہت اچھی طرح یاد ہے اور مجھے یہ  یاد ہے کہ یہ کب ہوا۔ ان کا کہنا تھا کہ جن لوگوں میں انسانسیت  سے محبت کے جذبات پائے جاتے ہیں انہیں اس نسل کشی سے بہت بڑا  دھچکا لگا۔ ہمیں دھچکا لگا کہ کس طرح اقوام متحدہ کی محفوظ پناہ گاہوں میں نسل کشی کرنے کی اجازت دی گئی۔ ہمیں سب کو دھچکا لگا۔ میں آج بھی یاد ہے کہ کیسے یہ 25سال پہلے ہوا۔مجھے یہ بات سوچ کر آج بھی صدمہ پہنچتا ہے کہ کیسے عالمی برادری اس کی اجاز ت دے سکتی تھی۔ یہ ہمارے لئے ضروری ہے کہ اس واقعہ سے سبق سیکھیں۔ عالمی برادری کودوبارہ کبھی بھی ایسی  چیزوں کو وقوع پزیر ہونے کی اجازت نہیں دینی چاہیئے۔ ہم کشمیر کے لوگوں کے لئے  مسائل دیکھ رہے ہیں،آٹھ لاکھ بھارتی فوجیوں نے 80لاکھ کشمیریوں کومحصور کیا ہوا ہے اور ہمیں سب کو  خدشہ ہے کہ اسی طرح کی نسل کشی کشمیر میں بھی ہو سکتی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ عالمی برادری اس چیز کا نوٹس لے  اور اس بات کو یقینی نائے کہ  دوبارہ اس طرح کی کارروائی نہ ہو۔ میں پاکستانی عوام کی جانب سے بوسینیا کے لوگوں کو سلام پیش کرتا ہوں اور ان کے لئے نیک خواہشات کا اظہار کرتا ہوں۔ واضح رہے کہ 1995 میں بوسنیا کی سرب فوج کی جانب سے 8ہزار مسلمان مردوں اور بچوں کے قتل عام کو یورپ میں دوسری جنگ عظیم کے بعد بد ترین قتل عام قرار دیا جاتا ہے۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Developed by : Murad Khan