نورنگ،کوئلے اورلکڑی کی قیمتوں میں بے تحاشہ اضافے

ہفتہ 11 Jul 2020


سرائے نورنگ (مانند نیوز ڈیسک) نورنگ  کے مختلف بھٹہ خشت مالکان نے کہاہے کہ کوئلے اورلکڑی کی قیمتوں میں بے تحاشہ اضافے کے باعث اُن کاکاروبارٹھپ ہوگیاہے جس سے سینکڑوں کی تعدادمیں مزدوروں کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑھ گئے اُنہوں نے حکومت سے فوری طورپرمالی پیکج کی منظوری کامطالبہ کیاہے۔ان خیالات کااظہارشاخ قلی خان میں واقع بھٹہ خشت مالکان نے میڈیاکے نمائندوں سے گفتگوکرتے ہوئے کیااُنہوں نے کہاکہ ملک میں جاری بے تحاشہ مہنگائی اورکوروناکے باعث لاگ ڈاؤن سے دیگرطبقوں کی طرح بھٹہ خشت کاکاروبارکافی متاثرہوگیاہے اوراب اُن کے کاروبارٹھپ  ہوگیاہے جس سے صرف متاثرنہیں ہوئے بلکہ سینکڑوں کی مزدوروں کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑھ گئے اُنہوں نے کہاکہ  پہلے کوئلہ نوہزارو روپے میں ملتے تھے اب وہ تقریباکرائے کے بغیرچودہ ہزار روپے ملتے ہیں جب کہ لکڑی کی قیمت میں بھی اضافہ ہوگئی جس سے اُن کے کاروبارٹھپ پوگئے  جس سے اُن کے ساتھ مزدوری کرنے والے بھی بے روزگارہوگئے،بھٹہ خشت مالکان کاکہناتھاکہ بھٹہ خشت میں اُن کوسات سو روپے مزدوری  ملتی ہے وہ بھی پچھلے تین مہینوں سے ختم ہوگیاہے،بھٹہ خشت مالکان نے حکومت سے کوئلے اورلکڑی کی قیمتوں میں کمی اوراُن کے لئے امدادی پیکج دینے کاپرزورمطالبہ کیاہے تاکہ اُنہیں اپنے کاروبار کودوبارہ شروع کریں۔


کہانی کو شیئر کریں۔


آپ یہ بھی دیکھنا پسند کریں گے

اپنی رائے کا اظہا ر کریں۔



Total Comments (0)

تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ مانندآئینہ محفوظ ہیں۔

بغیر اجازت کسی قسم کی اشاعت ممنوع ہے

Developed by : Murad Khan